نیوز الرٹ
  • بریکنگ :- ملک بھرمیں 24 گھنٹےکےدوران کوروناسےمزید 24 اموات
  • بریکنگ :- ملک بھرمیں کوروناسےجاں بحق افرادکی تعداد 28 ہزار 252 ہوگئی
  • بریکنگ :- 24 گھنٹےکےدوران 52 ہزار 589 کوروناٹیسٹ کیےگئے،این سی اوسی
  • بریکنگ :- 24 گھنٹےمیں کوروناکےمزید 893 کیس رپورٹ،این سی اوسی
  • بریکنگ :- ملک میں کورونامثبت کیسزکی شرح 1.69 فیصدرہی،این سی اوسی
Coronavirus Updates

لڑکی سے نازیبا حرکات میں ملوث پولیس ملازمین کی ضمانت

 لڑکی سے نازیبا حرکات میں ملوث پولیس ملازمین کی ضمانت

دنیا اخبار

انکوائری میں الزام ثابت ہونے پر تینوں ملازمین ملبہ ایک دوسرے پر ڈالتے رہے

فیصل آباد(سٹاف رپورٹر)منصورہ آباد کے علاقہ میں کینال روڈ پر جوڑے کو حراست میں لے کر لڑکی کیساتھ چھیڑخانی کے الزام میں گرفتار تھانہ منصورہ آباد کے پولیس ملازمین آصف ،عبدالمنان ،علی رضا وغیرہ تین کو قائم مقام ایس ایچ او سب انسپکٹر محمد امین تفتیشی سب انسپکٹر بلاول اور محرر عبدالحمید گجرنے جیل بھجوانے کے بجائے اپنے پیٹی بند بھائیوں کو ایک دن کیلئے راہ داری پر رکھ لیا اور اگلے روز ضمانت ہونے پر انکی ہتھکڑیاں کھول دیں ، انکوائری میں الزام ثابت ہونے پر تینوں ملازمین ملبہ ایک دوسرے پر ڈالتے رہے سی پی او نے تینوں ملازمین کو معطل کرکے شوکاز نوٹس جاری کردیا ہے ، یاد رہے 4 روز قبل تھانہ منصورہ آباد کے علاقہ سٹیم پاور کے قریب رات ڈیڑھ بجے منگیتر کے ہمراہ آنیوالے امین ٹائون کشمیر پل کے رہائشی وسیم کو ایگل سکواڈ کے ملازمین آصف ، عبدالمنان اور علی رضا وغیر ہ نے نوجوان کو کار سے اتارکراسکی منگیتر کے ساتھ چھیڑخانی ، نازیبا حرکات اور نقدی و دیگر سامان چھیننے کے بعد مبینہ طور پر رشوت لے کر انہیں رہا کردیا تھا ، معاملہ سوشل میڈیا پر وائرل ہونے کے بعد پولیس افسروں نے واقعہ کا نوٹس لے کر انکوائری کے بعد تینوں ملازمین کو گرفتار کروانے کے ساتھ ساتھ سابق ایس ایچ او منصورہ آباد محمد اشفاق کو معطل کردیا تھا ۔

Advertisement
روزنامہ دنیا ایپ انسٹال کریں