نیوز الرٹ
  • بریکنگ :- کس حیثیت سےسڑکوں پرنکلنےکادعویٰ کررہےہیں،عطاتارڑ
  • بریکنگ :- عمران خان کواپنےہی ساتھیوں کی سپورٹ حاصل نہیں،عطاتارڑ
  • بریکنگ :- پاکستان کی عوام آپ کیخلاف واضح فیصلہ دےچکی،عطاتارڑ
  • بریکنگ :- یہ سرکاری مشینری کوہٹائیں اورعوام سےآکربات کریں،عطاتارڑ
  • بریکنگ :- لاہور:زمینی حقائق جاننےکیلئےان کووقت لگےگا،عطاتارڑ
  • بریکنگ :- لاہور:ان کی کارکردگی سرے سےتھی ہی نہیں،عطاتارڑ
  • بریکنگ :- کارکردگی ٹھیک نہ ہونےکی بنیادپرشہزاداکبرسےاستعفیٰ لیاگیا،عطاتارڑ
Coronavirus Updates

کھاد ذخیرہ اندوزی پر گرفتاریاں‌, جرمانے , گودام , دکانیں سیل

کھاد ذخیرہ اندوزی پر گرفتاریاں‌, جرمانے , گودام , دکانیں سیل

ضلع بھرمیں 13 نومبرسے اب تک 1013 چھاپے ، 58مقدمات ،5132یوریا کھاد کی بوریاں ضبط ، کسی کو عوام کے استحصال کی اجازت نہیں دیںگے :ڈی سی

گوجرانوالہ (سٹاف رپورٹر) ضلعی انتظامیہ کا ذخیرہ اندوزوں کے خلاف کریک ڈاؤن جاری ہے اور 13 نومبر 2021 سے اب تک ضلع کی تحصیلوں میں اسسٹنٹ کمشنرز، پرائس مجسٹریٹس اور محکمہ زراعت کے افسروں نے 1013 چھاپے مارے ، 58مقدمات درج کرواکر 12افراد کو حراست میں لے لیا ، جرمانے کئے اور 5گوداموں اور د کانوں کو موقع پر سیل کر دیا گیا جبکہ کارروائی کے دوران 5132یوریا کھاد کی بوریاں قبضہ میں لے لی گئیں۔تفصیلات کے مطابق 13 نومبر 2021 سے اب تک ضلعی انتظامیہ اور محکمہ زراعت کے افسروں نے غیرقانونی ذخیرہ اندوزی میں ملوث کھاد ڈیلرز کیخلاف 1013چھاپہ مار کارروائیوں کے دوران58مقدمات درج اور 12افراد کو گرفتار کرواتے ہوئے حوالات بھجوادیا، ذخیرہ اندوزوں کو3لاکھ 65ہزار روپے کے جرمانے عائد کیے گئے ، کارروائیوں کے دوران یوریا کی 41 ہزار523سٹاک کی گئی بوریاں برآمد کر کے تحویل میں لے لیں اور زخیرہ اندوزی میں ملوث کھاد کی75ڈیلرز شاپس اور گودام سیل کیے گئے ۔ڈپٹی کمشنر دانش افضال نے کہا کہ یوریا کھاد کی35ہزار49 بوریاں کسانوں کو کنٹرول ریٹ پر فروخت کی جاچکی ہیں، تمام اسسٹنٹ کمشنرز و پرائس کنٹرول مجسٹریٹس کھاد کی مصنوعی قلت وقیمتوں میں اضافے اور ذخیرہ اندوزی کی روک تھام کے لیے بھرپور کریک ڈاؤن جاری رکھیں اور جہاں خلاف ورزی پائی جائے فوری کاروائی عمل میں لاتے ہوئے ذخیرہ شدہ کھاد کو قانون کے مطابق ضبط کر لیا جائے ۔ کسی کو عوام کے استحصال کی ہر گز اجازت نہیں دی جائے گی اور ضلع میں کھاد کی قیمت کی مانیٹرنگ اور وافر دستیابی کو یقینی بنایا جائے گا۔

Advertisement
روزنامہ دنیا ایپ انسٹال کریں