نیوز الرٹ
  • بریکنگ :- وزیراعظم عمران خان سےسعودی ولی عہدمحمدبن سلمان کی ملاقات
  • بریکنگ :- ریاض:ملاقات مڈل ایسٹ گرین انیشی ایٹوسمٹ کی سائیڈلائن پرہوئی
  • بریکنگ :- ملاقات میں دوطرفہ امورپرتبادلہ خیال کیاگیا،وزیراعظم آفس
  • بریکنگ :- وزیراعظم نےسعودیہ کی ترقی کیلئےشاہ سلمان بن عبدالعزیزکی قیادت کوسراہا
  • بریکنگ :- سعودی وژن 2030 کےلیےولی عہدشہزادہ محمدبن سلمان کی بھی تعریف
  • بریکنگ :- مڈل ایسٹ گرین انیشی ایٹوسربراہی اجلاس کےانعقادپرمحمدبن سلمان کومبارکباد
  • بریکنگ :- پاکستان گرین انیشی ایٹوکی تکمیل میں تعاون اورحمایت کرےگا،وزیراعظم
  • بریکنگ :- وزیراعظم کاسعودی عرب کیساتھ مضبوط برادرانہ تعلقات کےعزم کااعادہ
  • بریکنگ :- سعودی عرب کیساتھ پاکستان کےاسٹریٹجک تعلقات کی اہمیت پربھی بات چیت
  • بریکنگ :- وزیراعظم نےہراہم موڑپرپاکستان کی مددپرسعودی عرب کاشکریہ اداکیا
  • بریکنگ :- دونوں رہنماؤں کاتمام شعبوں میں دوطرفہ تعاون مزیدمضبوط بنانےپراتفاق
  • بریکنگ :- دونوں رہنماؤں کاافغانستان میں تازہ ترین پیشرفت کابھی جائزہ
  • بریکنگ :- وزیراعظم کاافغانستان کی مددکیلئےبین الاقوامی برادری کےکردارکی اہمیت پرزور
  • بریکنگ :- وزیراعظم کاافغانستان میں بگڑتی انسانی صورتحال پرتشویش کااظہار
  • بریکنگ :- عالمی برادری افغانستان میں انسانی ومعاشی بحران روکنےکیلئےاقدامات کرے،وزیراعظم
Coronavirus Updates

رواں سال 27ہزارشہریوں سے مختلف گاڑیاں چھینی گئیں

رواں سال 27ہزارشہریوں سے مختلف گاڑیاں چھینی گئیں

دنیا اخبار

38ہزارموٹرسائیکلیں چھینی یاچوری ہوئیں، شہری 16ہزارموبائل فونزسے محروم،بھتے کی 20وارداتیں،20کروڑکی بینک ڈکیتی، سابق کمشنرکاگھربھی لٹ گیا

کراچی (اسٹاف رپورٹر) رواں سال 27 ہزار شہری اپنی مختلف اقسام کی گاڑیوں سے محروم ہوئے ، بینک سے 20 کروڑ 50 لاکھ روپے بھی چوری کیے گئے ، لیکن ملزمان کے خلاف کارروائی تقریباً نہ ہونے کے برابر ہے ۔ سی پی ایل سی کے مطابق آٹھ ماہ کے دوران 355 شہری ڈکیتی مزاحمت اور دیگر واقعات میں قتل جبکہ 842 افراد زخمی ہوئے ۔ رپورٹ کے مطابق آٹھ ماہ میں 35 ہزار کے قریب موٹر سائیکلیں اور 1061 کاریں چھینی گئیں یا چوری ہوئیں جبکہ 3ہزار 187 شہری قیمتی موٹر سائیکلوں سے محروم ہوئے ۔ رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ جنوری سے اگست تک 27 ہزار 821 شہریوں کی 70 سی سی موٹر سائیکلیں جبکہ 825 رکشے چوری ہوئے یا چھینے گئے ۔ راہزنی کی وارداتوں کے دوران سڑک پر گھر کے باہر 16 ہزار 591 موبائل چھینے گئے ۔ رپورٹ کے مطابق کراچی میں اغوا برائے تاوان کی 12، بھتے کی 20 وارداتیں ہوئیں جبکہ بینک ڈکیتی اور بینک لاکر سے چوری کی واردات میں کروڑوں روپے کا سونا اور سامان لوٹا گیا ۔ سی پی ایل سی کی مرتب کردہ رپورٹ میں انکشاف کیا گیا ہے کہ راہزنی کی وارداتوں میں عام شہریوں کے علاوہ پولیس اور دیگر افراد بھی لٹنے والوں میں شامل ہیں۔ان آٹھ ماہ کے دوران سابق کمشنر کراچی کی والدہ کے گھر بھی ڈکیتی کی بڑی واردات سمیت کراچی کے تمام اضلاع میں ڈکیتی اور چوری کی وارداتیں رونما ہوئیں اور ان کارروائیوں کے دوران اربوں روپے کی نقدی اور جیولری لوٹی گئی۔

Advertisement
روزنامہ دنیا ایپ انسٹال کریں