ہم پرانی غلطیوں سے باہر نہیں آرہے ،ڈاکٹر طارق رفیع

ہم پرانی غلطیوں سے باہر نہیں آرہے ،ڈاکٹر طارق رفیع

کراچی (اسٹاف رپورٹر)چیئر مین سندھ ایچ ای سی پروفیسرڈاکٹر ایس ایم طارق رفیع نے کہا کہ ہم پرانی غلطیوں سے باہر نہیں آرہے جو ہمارے مسائل کی ایک بڑی وجہ ہے ۔

ہمارا سیاسی نظام اس لئے کمزور ہے کیونکہ ہمارا معاشرتی نظام مضبوط نہیں ہوسکا اور ہمارے اندر اعلیٰ معاشرتی اور اخلاقی اقدار کا فقدان ہے جس کی کمی کو پورا کرکے ہی ہم ترقی کر سکتے ہیں۔ہم سمجھتے ہیں کہ بین الاقوامی ایکسچینج پروگرام سے ہی ہماری تربیت اچھی ہوسکتی ہے مگر میری رائے ہے کہ اساتذہ اور طلبہ کو بین الصوبائی ایکسچنج پروگرام پر بھیجنا چاہئے تا کہ وہ دوسرے صوبوں کے کلچر کو سمجھ سکیں۔ان خیالات کا اظہارانہوں نے جامعہ کراچی کے شعبہ سیاسیات کے زیراہتمام چائینیزٹیچرزمیموریل آڈیٹوریم جامعہ کراچی میں منعقدہ دوروزہ بین الاقوامی کانفرنس بعنوان: ‘‘پاکستان کے سیاسی کلچر میں نظریات کی تبدیلی’’ کی افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔واشنگٹن سینٹر فارانٹرنشپ اکیڈمک سیمینارز واشنگٹن ڈی سی امریکہ کے ہسٹری اور انٹرنیشنل ریلیشنز کے پروفیسرڈاکٹر ارشد سید کریم نے اپنے کلیدی خطاب میں کہا کہ موجودہ بیوروکریسی کے تانے بانے انگریز حکمرانوں سے ملتے ہیں ۔وہ نظام جو آقا اور محکوم کے لئے تھا اور اس کی کسی بھی آزاد ملک میں گنجائش نہیں ہونی چاہئے تھی، ہم آج تک اس نظام کو چلا رہے ہیں۔جامعہ کراچی کے وائس چانسلر پروفیسرڈاکٹر خالد محمودعراقی نے کہا کہ خواتین کی قومی دھارے میں شرکت کو بڑھاوا دینا ترقی پسند معاشرے کی ضرورت ہے ۔ 

Advertisement
روزنامہ دنیا ایپ انسٹال کریں