نیوز الرٹ
  • بریکنگ :- مہنگائی اور غربت سے عوام تنگ آچکےہیں ،خواجہ آصف
  • بریکنگ :- حکومت کابسترکسی بھی وقت گول ہوسکتاہے،خواجہ آصف
  • بریکنگ :- راولپنڈی:انتخابات کسی بھی وقت ہوسکتےہیں،خواجہ آصف
  • بریکنگ :- ہمیں اپنی صفوں میں اتحاد پیداکرناہوگا،رہنما (ن) لیگ خواجہ آصف
  • بریکنگ :- راولپنڈی:جھگڑے کارکنوں کے نہیں قیادتوں کےہیں ،خواجہ آصف
Coronavirus Updates

ٹرینوں کی کمرشل مینجمنٹ کا آغاز، مسافروں کی ریزرویشن کیلئے ٹینڈر کھل گئے

ٹرینوں کی کمرشل مینجمنٹ کا آغاز، مسافروں کی ریزرویشن کیلئے ٹینڈر کھل گئے

دنیا اخبار

قراقرم کیلئے ریلوے کی ذیلی کمپنی پراکس نے 1ارب84کروڑ روپے سالانہ کی بولی دی ،بولیوں کی منظور ی یا مستردکرنے کا فیصلہ چند روز میں ہوگا کمپنیوں کوبولی منظور ہونے کی صورت میں سٹیشنوں اورٹرینوں میں اپنا کمرشل سٹاف تعینات کرنے کی اجازت دی جائے گی:ریلوے ذرائع

ملتان(خبرنگار خصوصی )مختلف ٹرینوں کی کمرشل مینجمنٹ (مسافروں کی ریزرویشن) پرائیویٹ کرنے کے سلسلہ میں گزشتہ روز چیف مارکیٹنگ منیجر ریلوے ہیڈ کوارٹرکے آفس میں فنانشل بڈ کھولی گئی۔ ذرائع کے مطابق سب سے زیادہ بولی لاہور کراچی لاہور کے درمیان چلنے والی قراقرم کے لئے ریلوے کی ذیلی کمپنی پراکس نے 1ارب84کروڑ روپے سالانہ دی۔ اسی طرح پراکس نے راولپنڈی کراچی راولپنڈی کے درمیان چلنے والی تیزگام کیلئے 1ارب58کروڑروپے ، لاہور کراچی لاہور کے لئے چلنے والی ملت ایکسپریس کے لئے 1ارب 18 کروڑ50لاکھ، سیالکوٹ کراچی سیالکوٹ کے درمیان چلنے والی علامہ اقبال ایکسپریس کے لئے 1ارب 14 کروڑ 69لاکھ، راولپنڈی کراچی راولپنڈی کے درمیان چلنے والی پاکستان کیلئے 1ارب 33 کروڑ10 لاکھ روپے کی بولی دی ہے ۔ایس ایس آر کمپنی نے لاہور کراچی لاہور کے درمیان چلنے والی شاہ حسین ایکسپریس کے لئے 1ارب 26کروڑ60لاکھ، پشاور کراچی پشاور کے درمیان چلنے والی رحمن بابا کے لئے 1ارب 26کروڑ، ملتان کراچی ملتان کے درمیان چلنے والی زکریا ایکسپریس کے لئے 98 کروڑ، اسلام آباد لاہور اسلام آباد کے درمیان چلنے والی اسلام آباد ایکسپریس کے لئے 25کروڑ اورمیانوالی ایکسپریس کیلئے 90 کروڑ روپے سالانہ کی بولی دی گئی ہے ۔ راس لاجسٹک کمپنی نے پشاور کوئٹہ پشاور کے درمیان چلنے والی جعفر کے لئے 1 ارب 60 کروڑ، لاہور راولپنڈی لاہورکے درمیان چلنے والی سبک خرام کے لئے 25کروڑ70لاکھ روپے بولی دی ہے ۔ عمران انٹرپرائززکمپنی نے غوری ایکسپریس کے لئے 9کروڑ30لاکھ روپے بولی دی ہے ۔ ریلوے ذرائع کے مطابق ریلوے ہیڈ کوارٹر آئندہ چند روز میں کمپنیوں کی فنانشل بڈ کا جائزہ لے کر بولی کو منظور یا مسترد کرنے کا فیصلہ کرے گا۔ جن کمپنیوں کی بولی منظور کی جائے گی انہیں سٹیشنوں اورٹرینوں میں اپنا کمرشل سٹاف تعینات کرنے کی اجازت دی جائیگی۔

Advertisement
روزنامہ دنیا ایپ انسٹال کریں