نیوز الرٹ
  • بریکنگ :- فرانسیسی صدرمیکرون کااپنےسفیرکوواشنگٹن لوٹنےکاحکم
  • بریکنگ :- دونوں ممالک اس موضوع پرمزیدمشاورت کریں گے،مشترکہ بیان
  • بریکنگ :- امریکامضبوط یورپی دفاع کی اہمیت کوتسلیم کرتاہے،مشترکہ بیان
  • بریکنگ :- دونوں ممالک میں کشیدگی آسٹریلیاسےآبدوزمعاہدےکےتنازع پرہوئی تھی
  • بریکنگ :- آسٹریلیانےفرانس کےساتھ 12ڈیزل الیکٹرک آبدوزیں تیارکرنےکامعاہدہ ختم کردیا تھا
  • بریکنگ :- آبدوزتنازع،امریکی صدرجوبائیڈن کافرانسیسی ہم منصب کوٹیلی فون
  • بریکنگ :- آسٹریلیاسےآبدوزکی ڈیل کےبعدپیدا ہونےوالی کشیدگی پرتبادلہ خیال
Coronavirus Updates

مصنوعی مہنگائی روکنے کیلئے ڈپٹی کمشنرز کو سخت احکامات جاری

مصنوعی مہنگائی روکنے کیلئے ڈپٹی کمشنرز کو سخت احکامات جاری

دنیا اخبار

اسسٹنٹ کمشنرز،پرائس مجسٹریٹس اور مارکیٹ کمیٹی کے افسران کو ہدایات جاری

ملتان(کورٹ رپورٹر)حکومت پنجاب نے مصنوعی مہنگائی روکنے کے لئے صوبہ کے تمام ڈپٹی کمشنرز کو سخت احکامات جاری کردئیے ہیں۔حکومت کے احکامات کی روشنی میں ضلعی انتظامیہ ملتان نے بھی گرانفروشی روکنے کے لئے لائحہ عمل تیار کر لیا ہے اور ڈپٹی کمشنر علی شہزاد نے اسسٹنٹ کمشنرز،پرائس مجسٹریٹس اور مارکیٹ کمیٹی کے افسران کو نئی ہدایات جاری کر دیں ہیں۔ڈپٹی کمشنر نے کہا ہے کہ منڈیوں میں آڑھتیوں اور کمیشن ایجنٹس کو پامرہ ایکٹ کے مطابق کمیشن دیا جائے گا،کمیشن ایجنٹس کو پھلوں پر2.5 فیصد اور سبزیوں پر3.12 فیصد سے زائد منافع نہیں لینے دیا جائے گا۔علی شہزاد نے کہا ہے کہ مارکیٹ کمیٹی کا سٹاف اور افسران روزانہ سبزی و فروٹ منڈی میں نیلامی کو مانیٹر کریں گے جبکہ مارکیٹ کمیٹی کے افسران اور سٹاف کی منڈی میں موجودگی کو تھرڈ پارٹی کے ذریعے مانیٹر کیاجائے گا اور اسسٹنٹ کمشنرز بھی منڈیوں میں مارکیٹ کمیٹی کی کارکردگی کو چیک کریں گے اور روزانہ اس بارے رپورٹ دیں گے ۔ ڈپٹی کمشنر نے کہا ہے کہ اشیائے ضروریہ کی قیمتوں کے تعین کے لئے پرائس کنٹرول کمیٹی کا اجلاس ہر ماہ دو بار منعقد کیا جائے گا۔انہوں نے کہا ہے کہ ہر پرائس مجسٹریٹ کی انفرادی پراگرس کو روزانہ جانچا جائے گا اور تسلی بخش کارکردگی نہ دکھانے پر پرائس مجسٹریٹس کو ضلع سے ٹرانسفر کر دیا جائے گا،علی شہزاد نے کہا کہ چیف سیکرٹری پنجاب پرائس چیکنگ کے حوالے سے ہر ہفتے اضلاع کی کارکردگی کا جائزہ لیں گے ۔پرائس چیکنگ میں ناقص کارکردگی دکھانے والے افسران کو معطلی کا سامنا بھی کرنا پڑ سکتا ہے ۔

Advertisement
روزنامہ دنیا ایپ انسٹال کریں