نیوز الرٹ
  • بریکنگ :- ریاست مدینہ پرمضمون لکھاتومخالفین نےکہادین کےپیچھےچھپ رہاہے،وزیراعظم
  • بریکنگ :- مہنگائی صرف پاکستان کامسئلہ نہیں ہے،وزیراعظم عمران خان
  • بریکنگ :- ہمیں 20 ارب ڈالرکاکرنٹ اکاؤنٹ خسارہ ملا،وزیراعظم
  • بریکنگ :- کوروناکےدوران عوام پر 8 ارب ڈالرخرچ کیے،وزیراعظم
  • بریکنگ :- کوروناسےساری دنیامتاثرہوئی،وزیراعظم عمران خان
  • بریکنگ :- پٹرول کی قیمت شایدمزیدبڑھ جائے،وزیراعظم عمران خان
  • بریکنگ :- مہنگائی کے مسئلے سے بہت جلد نکل جائیں گے ،وزیراعظم
  • بریکنگ :- پہلی بارکریمنل جسٹس سسٹم میں اصلاحات لارہے ہیں،وزیراعظم
  • بریکنگ :- کوشش ہوتی ہےکہ کمزورطبقےکےساتھ کھڑا ہوں، وزیراعظم
  • بریکنگ :- ایف بی آر کےڈھائی ہزارارب روپےکےکیسزعدالتوں میں زیرالتواہیں،وزیراعظم
  • بریکنگ :- معیشت کو دستاویزی شکل دینے کی کوشش کررہےہیں،وزیراعظم
  • بریکنگ :- 22کروڑلوگوں کا 20لاکھ لوگ ٹیکس دےکربوجھ نہیں اٹھاسکتے،وزیراعظم
  • بریکنگ :- پارلیمنٹ میں این آراووالےشورمچاتےہیں،بولنےنہیں دیتے،وزیراعظم
  • بریکنگ :- ٹیکس نہیں دیں گےتوملک چلانےکیلئےپیسہ کہاں سے آئےگا،وزیراعظم
  • بریکنگ :- ایف بی آر میں اصلاحات کی کوشش کررہےہیں،وزیراعظم
  • بریکنگ :- جولوگ ٹیکس نہیں دیتےان کےپیچھے جائیں گے،وزیراعظم
  • بریکنگ :- ملک میں پہلی بارنچلےطبقےکواسکالرشپس دیئےجارہےہیں ،وزیراعظم
Coronavirus Updates

لاہور میں کم گیس پریشر کی شکایات، گنجان آباد علاقوں میں شہری بازاری کھانا کھانے پر مجبور

تجارت

لاہور: (دنیا نیوز) لاہور کے مختلف علاقوں میں گیس بندش اور لو پریشر کی شکایات میں مسلسل اضافہ ہو گیا، گنجان آباد علاقوں میں گیس بندش نے شہریوں کو بازار سے کھانا لا کر کھانے پر مجبور کر دیا۔

گیس بندش اور لو پریشر کی شکایات میں مسلسل اضافہ، شہر کے متعدد علاقوں میں شہری دن بھر گیس سے محروم رہنے لگے۔ گیس کی عدم دستیابی کے باعث صبح کا ناشتہ اور رات کا کھانا بھی بازار سے آنے لگا، گیس بندش اور لو پریشر سے گھریلو صارفین کے ساتھ کمرشل صارفین بھی پریشان ہیں۔ ہوٹل اور تندور مالکان نے قدرتی گیس نہ ہونے پر ایل پی کی کا استعمال شروع کردیا۔

شاد باغ کے علاقہ وسن پورہ محمدی محلہ میں دن بھر شہری گیس سے محروم رہنے لگے، اہل علاقہ نے گیس کی بندش کے خلاف احتجاج کیا، حکومت کے خلاف نعرے بازی کرتے رہے۔

شہریوں کا کہنا ہے کہ دن بھر گیس دستیاب نہیں، ہوٹلوں سے کھانا لانے پر مجبور ہیں، گیس نہ ہونے کی وجہ سے بچے صبح بھوکے سکول جاتے ہیں، متعدد بار شکایات کے باوجود سوئی ناردرن حکام کوئی ایکشن نہیں لیتے۔ 

Advertisement
روزنامہ دنیا ایپ انسٹال کریں