نیوز الرٹ
  • بریکنگ :- مسئلہ کشمیرسلامتی کونسل کی قراردادوں کےمطابق حل ہوگا،ترجمان
  • بریکنگ :- بھارت کوسی پیک سےمتعلق بیان دینےکاکوئی حق نہیں،ترجمان دفترخارجہ
  • بریکنگ :- سی پیک سےسماجی ومعاشی ترقی ہوگی اورعلاقائی روابط بڑھیں گے،ترجمان
  • بریکنگ :- بھارتی پروپیگنڈےسےسی پیک کی اہمیت کم نہیں ہوگی،ترجمان دفترخارجہ
  • بریکنگ :- بھارت افغانستان سےمتعلق تشویش ظاہرکرنابندکرے،ترجمان دفترخارجہ
  • بریکنگ :- بھارت کاافغانستان میں امن عمل کونقصان پہنچانےکاکردارعیاں ہے،ترجمان
  • بریکنگ :- پاکستان نےبھارتی وزیرمملکت خارجہ امورکاپارلیمنٹ میں بیان مستردکردیا
  • بریکنگ :- بھارتی وزیرنےکشمیرتنازع پرغیرذمہ دارانہ بیان دیا،ترجمان دفترخارجہ
  • بریکنگ :- بھارتی وزیرنےافغان صورتحال،سی پیک سےمتعلق بےبنیادبیان دیا،ترجمان
  • بریکنگ :- بھارت کےجھوٹےدعوےحقائق تبدیل نہیں کرسکتے،ترجمان دفترخارجہ
  • بریکنگ :- جھوٹےدعوےکشمیرمیں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں سےتوجہ نہیں ہٹاسکتے،ترجمان
  • بریکنگ :- مقبوضہ کشمیرعالمی سطح پرتسلیم شدہ تنازع ہے،ترجمان دفترخارجہ
Coronavirus Updates

پاکستان کی مقبوضہ جموں وکشمیر میں 3 بے گناہ کشمیریوں کے قتل کی شدید مذمت

پاکستان

اسلام آباد: (دنیا نیوز) پاکستان نے بھارت کے غیر قانونی زیر قبضہ جموں وکشمیر کے ضلع بارہ مولہ میں بھارتی قابض فوج کے ہاتھوں مزید تین بے گناہ کشمیریوں کے قتل کی شدید مذمت کی ہے۔

دفتر خارجہ کے ترجمان زاہد حفیظ چودھری نے ایک بیان میں کہا کہ بھارتی فوج نے کورونا وبا کے باوجود نام نہاد محاصرے اور تلاشی کی کارروائیوں کی آڑ میں ماورائے عدالت قتل کا سلسلہ تیز کر دیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ قابض بھارتی فوج رواں برس اب تک پچپن سے زائد کشمیریوں کو شہید کر چکی ہے اور کشمیری نوجوانوں کی اندھا دھند گرفتاریوں کا سلسلہ بھی جاری ہے۔

ترجمان نے کہا کہ پاکستان بھارتی فورسز کی جانب سے کشمیریوں کے ماورائے عدالت قتل کی عالمی سطح پر آزادانہ تحقیقات اور ذمہ داران کو ان کے سنگین جرائم پر سزائیں دینے کے مطالبے کا اعادہ کرتا ہے۔
 

Advertisement
روزنامہ دنیا ایپ انسٹال کریں