نیوز الرٹ
  • بریکنگ :- وزارت داخلہ کی جانب سے ایمنسٹی اسکیم کی سمری کابینہ میں پیش ہوگی
  • بریکنگ :- بین المذاہب ہم آہنگی پالیسی کامسودہ کابینہ میں منظوری کیلئےپیش ہوگا
  • بریکنگ :- رولزآف بزنس میں ترامیم کی تجاویزکابینہ اجلاس میں پیش ہوں گی
  • بریکنگ :- وزیراعظم نےوفاقی کابینہ کا اجلاس 18 جنوری کوطلب کرلیا
  • بریکنگ :- ملکی سیاسی، معاشی اور کورونا صورتحال پر غور ہوگا
  • بریکنگ :- اسلام آباد: وفاقی کابینہ اجلاس کا 14 نکاتی ایجنڈا جاری
  • بریکنگ :- کابینہ پاکستان میں مقیم غیرملکیوں کوایمنسٹی اسکیم دینےکافیصلہ کرےگی
  • بریکنگ :- غیرملکیوں کوپاکستان سےواپس جانےکیلئے ایمنسٹی اسکیم دی جارہی ہے
Coronavirus Updates

سیالکوٹ جیسے واقعات کو برداشت نہیں کرینگے: سیاسی و عسکری قیادت

پاکستان

اسلام آباد: (دنیا نیوز) سیاسی و عسکری قیادت نے سیالکوٹ میں سری لنکن شہری کے قتل پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ ہجوم کو قانون ہاتھ میں لینے کی اجازت نہیں دی جا سکتی اور ایسے واقعات کو برداشت نہیں کیا جا سکتا۔

 وزیراعظم عمران خان کی زیر صدارت اعلیٰ سطحی اجلاس کا اعلامیہ جاری کر دیا گیا ہے۔ آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ، وزیر اطلاعات فواد چودھری، وزیر داخلہ شیخ رشید احمد، قومی سلامتی کے مشیر ڈاکٹر معید یوسف، وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار اور اعلیٰ عسکری و سول افسران نے شرکت کی۔

وزیراعظم عمران خان کی زیر صدارت اجلاس میں ملک کی مجموعی سیکیورٹی صورتحال کا جائزہ لیا گیا۔

اعلامیہ کے مطابق اجلاس کے شرکاء نے سیالکوٹ میں سری لنکن شہری کے قتل کے ظالمانہ فعل پر شدید تشویش کا اظہار کیا اور قصورواروں کو انصاف کے کٹہرے میں لانے کے عزم کا اعادہ کیا۔ افراد اور ہجوم کو قانون ہاتھ میں لینے کی اجازت نہیں دی جا سکتی۔ ایسے واقعات کو برداشت نہیں کیا جا سکتا۔ اجلاس شرکاء ایسے واقعات کی روک تھام کے لیے ایک جامع حکمت عملی پر عمل درآمد کیا جائے گا۔

اجلاس شرکاء کا کہنا ہے کہ تمام مجرموں کو سخت سزائیں دی جائیں گی، ملک عدنان کی بہادری اور جرات کی تعریف کرتے ہیں، سری لنکن شہری کے اہل خانہ سے بھی تعزیت کا اظہار کرتے ہیں۔

سانحہ سیالکوٹ نے ہمارا سر شرم سے جھکا دیا: وزیراعظم عمران خان

اس سے قبل وزیراعظم عمران خان کی زیرصدارت ملک میں امن وامان کے حوالے سے اجلاس ہوا، جس میں وزیرداخلہ شیخ رشید اور وزیراعلیٰ پنجاب سمیت اہم شخصیات نے شرکت کی۔

اجلاس میں ملک کی مجموعی امن وامان کی صورتحال کا جائزہ لیا گیا، اور وزیراعظم عمران خان کو سیالکوٹ واقعہ پر بریفنگ دی گئی اور رپورٹ پیش کی گئی، جب کہ وزیر اعظم کے مشیر قومی سلامتی معید یوسف نے ارکان کو قومی سلامتی پالیسی پر بریفنگ دی ۔

وزیراعظم عمران خان نے ہدایت کی کہ سانحہ سیالکوٹ نے ہمارا سر شرم سے جھکا دیا ہے، ملزمان کو قرار واقعی سزا یقینی بنائی جائے، آئندہ اس قسم کے واقعات کی روک تھام کے لیے جامع حکمت عملی بنائی جائے۔

امید ہے وزیراعظم پاکستان حملہ آورروں کیخلاف سنجیدہ اقدام کریں گے: بھائی پریانتھا کمارا

عرب میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے پریانتھا کمارا کے بھائی کمال کمارا نے کہا کہ سری لنکن حکومت مقتول کی مالی امداد کے لئے پاکستان حکومت اورفیکٹری مالک سے رابطہ کرے۔ مقتول کے پسماندگان تنہا ہوگئے ، دوبچوں کو تعلیم حاصل کرنی ہے۔

اپنی بات کو جاری رکھتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ مقتول حملہ آوروں سے کہوں گا ایسے غیر انسانی حملے مت کرو، ہم سب انسان ہیں، ایک دوسرے کےمذہب کا احترام کرنا چاہیے۔ ہمیں امید ہے وزیر اعظم پاکستان حملہ آوروں کے خلاف سنجیدہ اقدام کریں گے۔

وفاقی وزیر داخلہ کا سری لنکن ہائی کمشن کا دورہ

وفاقی وزیر داخلہ شیخ رشید احمد نے سری لنکن ہائی کمیشن اسلام آباد کا دورہ کیا اور ہائی کمشنر وائس ایڈمرل موہن وجے کرما سے ملاقات کی۔

وفاقی وزیر داخلہ نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر بتایا کہ سیالکوٹ فیکٹری حادثہ میں سری لنکا کے شہری پریانتھا کمارا کی ہلاکت پر تعزیت کا اظہار کیا اور افسوسناک واقعے پرحکومت اور پاکستانی عوام کی طرف سے افسوس اور دکھ کا اظہار کیا۔

انہوں نے کہا کہ پریانتھا کماراکی افسوسناک موت پر پاکستانی عوام سوگوار ہے۔ حکومت اور پاکستانی عوام پرنتھار کماراکی ہلاکت پر خاندان کے غم میں برابر کے شریک ہیں۔ سانحہ سیالکوٹ واقعے میں ملوث تمام مجرمان کو قانون کے کٹہرے میں لائینگے۔ اس واقعے میں ملوث کسی بھی شخص سے رعایت نہیں برتی جائیگی۔ ہلاکت میں ملوث تمام مجرمان کو حکومت مثالی سزا دلائے گی۔

اس موقع پر سری لنکن ہائی کمشنر نے کہا کہ پریانتھا کمارا کی ہلاکت پر حکومت اور پاکستانی عوام کے ردعمل پر بہت مطمئن ہیں، افسوسناک حادثے پر عوام کے جذبات کو قدر کی نگاہ سے دیکھتے ہیں۔ پاکستان اور سری لنکا کے تعلقات انتہائی دیرینہ ہیں۔ حالیہ واقعے سے متاثر نہیں ہونگے۔ نعش سرکاری اعزاز کے ساتھ سری لنکا رخصت کرنے پر حکومت پاکستان کے مشکور ہیں۔

پی ٹی آئی قیادت کا سری لنکن ہائی کمشن کا دورہ

پی ٹی آئی قیادت نے سری لنکن ہائی کمیشن جاکر سیالکوٹ واقعہ پر اظہار تعزیت کیا۔ وفد کی قیادت جنرل ریٹائرڈ خالد نعیم لودھی نے کی۔ وفد نے کہا کہ سری لنکن مینجر کے قتل کا واقعہ انتہائی افسوسناک ہے، دکھ کا اظہار الفاظ میں ممکن نہیں، پوری قوم اس واقعے کی بھرپور مذمت کرتی ہے، پوری پاکستانی قوم سری لنکن منیجر کے قتل پر رنجیدہ ہے۔

پاکستان تحریک انصاف کے وفد نے سری لنکن حکام کو یقین دلایا کہ اس جرم میں شامل ہر ایک شخص کو انصاف کے کٹہرے میں لایا جائے گا اور ذمہ دران کو پاکستانی قانون کے مطابق سخت سے سخت سزا دی جائے گی۔

سری لنکا کے ہائی کمشنر نے کہا کہ ملزمان کے خلاف پاکستان کی فوری کارروائی سے یقین ہے کہ متاثرہ خاندان کو انصاف ملے گا۔ پاکستان کے ساتھ ہمارے تعلقات بہترین رہے ہیں، ان پر کوئی آنچ نہیں آئے گی۔

پریانتھا کمارا کی لاش سری لنکا روانہ

ادھر سیالکوٹ واقعہ میں جاں بحق ہونے والے سری لنکن شہری پریانتھاکی لاش سری لنکا بھجوا دی گئی۔ لاہور ائیر پورٹ پر مشیر وزیر اعظم طاہر اشرفی اور صوبائی وزیر اقلیتی امور اعجاز عالم نے لاش کو جہاز تک پہنچایا۔ سری لنکن باشندے کی لاش سری لنکن ائیر لائن یو ایل 186 کے ذریعے کولمبو روانہ کی گئی۔

لاہور ائیر پورٹ پر صوبائی وزیر برائے اقلیتی امور اعجاز عالم، سری لنکن سفارت خانے کے نمائندے، فارن آفس کے افسران اور متعلقہ ادارے کے لوگ موجود تھے۔

لاہور ائیرپورٹ کے باہر میڈیا سے گفتگو کرتے وزیر اعظم کے مشیر برائے مذہبی امور طاہر اشرفی نے واقعے کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ ذمہ داروں کو کیفر کردار تک پہنچایا جائے گا، سری لنکن حکومت کو یقین دلاتے ہیں کہ انصاف کیا جائے گا۔

Advertisement
روزنامہ دنیا ایپ انسٹال کریں