نیوز الرٹ
  • بریکنگ :- پاکستان اورسعودی عرب کےتاریخی تعلقات ہیں،شاہ محمودقریشی
  • بریکنگ :- کچھ لوگوں نےپاک سعودی عرب تعلقات سےمتعلق پروپیگنڈاکیا،وزیرخارجہ
  • بریکنگ :- عیدکےبعدسعودی عرب کاوفدپاکستان آئےگا،وزیرخارجہ شاہ محمودقریشی
  • بریکنگ :- سعودی وزیرخارجہ بھی پاکستان کادورہ کریں گے،شاہ محمودقریشی
  • بریکنگ :- سعودی عرب کاکشمیرکےحوالےسےکردارڈھکاچھپانہیں،وزیرخارجہ
  • بریکنگ :- وزیراعظم نےاپنانقطہ نظرسعودی قیادت کوسمجھایا،شاہ محمودقریشی
  • بریکنگ :- مسئلہ کشمیرپرثالثی سےبھارت نےہمیشہ انکارکیا،شاہ محمودقریشی
  • بریکنگ :- 2ایٹمی قوتیں جنگ نہیں کرسکتیں،واحدراستہ بات چیت ہے،وزیرخارجہ
  • بریکنگ :- پاکستان اپنےمعاملات طےکرنےکیلئےتیارہے،شاہ محمودقریشی
  • بریکنگ :- پاکستان نےنہیں بھارت نےمعاملات کوبگاڑاہے،شاہ محمودقریشی
  • بریکنگ :- مسئلہ کشمیریواین قراردادوں کےمطابق حل کیاجاسکتاہے،وزیرخارجہ
  • بریکنگ :- پاکستان اپنےاصولی موقف پرقائم ہے،وزیرخارجہ شاہ محمودقریشی
  • بریکنگ :- آرٹیکل 370کومقبوضہ کشمیرکی جماعتوں نےمستردکیا،وزیرخارجہ
  • بریکنگ :- مسلم لیگ(ن)کےکچھ لوگ مسئلہ کشمیرپرسیاست نہ کریں،شاہ محمودقریشی
  • بریکنگ :- مقبوضہ کشمیرکےتمام معاملات بھارت کااندرونی معاملہ نہیں،وزیرخارجہ
  • بریکنگ :- سعودی عرب میں افغانستان کےمعاملات پربھی گفتگوہوئی،شاہ محمودقریشی
  • بریکنگ :- سعودی عرب نےافغان امن کیلئےپاکستان کی کوششوں کوسراہا،وزیرخارجہ
  • بریکنگ :- افغانستان میں امن سےپاکستان سمیت خطےکوفائدہ ہوگا،شاہ محمودقریشی
  • بریکنگ :- سعودی عرب بھی افغانستان میں امن چاہتاہے،شاہ محمودقریشی
  • بریکنگ :- چاہتےہیں افغانستان اپنےمستقبل کافیصلہ بات چیت سےکرے،وزیرخارجہ
  • بریکنگ :- پاکستان افغانستان کےمعاملات میں مداخلت نہیں کررہا،شاہ محمودقریشی
  • بریکنگ :- افغانستان میں بدامنی پھیلی توپاکستان کونقصان ہوگا،شاہ محمودقریشی
  • بریکنگ :- افغانستان کامعاملہ مذاکرات سےہی حل ہوگا،شاہ محمودقریشی
  • بریکنگ :- پاکستان کاامریکاکوہوائی اڈےدینےکاکوئی ارادہ نہیں،شاہ محمودقریشی
  • بریکنگ :- پاکستان کےامت مسلمہ کےساتھ بہترین تعلقات ہیں،وزیرخارجہ
  • بریکنگ :- قطر،یمن اورایران کےساتھ تعلقات میں بہتری آرہی ہے،وزیرخارجہ
  • بریکنگ :- پاکستان اورچین کےدرمیان تاریخی تعلقات ہیں اوررہیں گے،وزیرخارجہ
  • بریکنگ :- پاک امریکاتعلقات میں اتارچڑھاؤرہا،وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی
  • بریکنگ :- پاکستان نئی امریکی انتظامیہ سےبہترتعلقات چاہتاہے،شاہ محمود قریشی
  • بریکنگ :- امریکانےافغانستان میں پاکستان کےکردارکوسراہا،شاہ محمودقریشی
  • بریکنگ :- پاکستان چاہتاہےبرادرممالک میں غلط فہمیاں پیدانہ ہوں،وزیرخارجہ
  • بریکنگ :- مسجداقصیٰ میں فلسطینیوں پرمظالم کی مذمت کرتےہیں،وزیرخارجہ
  • بریکنگ :- سعودی عرب میں اسرائیل کےحوالےسےگفتگونہیں ہوئی،وزیرخارجہ
  • بریکنگ :- پاکستان پراسرائیل کےحوالےسےکوئی دباؤنہیں،شاہ محمودقریشی
  • بریکنگ :- سعودی عرب نےدباؤکےباوجوداسرائیل پرموقف نہیں بدلا،وزیرخارجہ

حجراسود:جدید تکنیک سے بنائی گئی تصاویر منظر عام پر

حجراسود:جدید تکنیک سے بنائی گئی تصاویر منظر عام پر

دنیا اخبار

7گھنٹے تک عکس بندی ، تصاویر اکٹھا کرنے میں تقریباً 50 گھنٹے لگے

ریاض( مانیٹرنگ ڈیسک)خانہ کعبہ کے جنوب مشرقی حصے پر موجود مقدس پتھر حجراسود کی ایسی تصاویر پہلی مرتبہ منظر عام پر لائی گئی ہیں جو فوٹوگرافی کی جدید ترین تکنیک کے ذریعے بنائی گئی ہیں۔سعودی عرب میں موجود مسلمانوں کی دو مقدس مساجد مسجد نبوی ؐ اور مسجد الحرام کے امور کی نگرانی کرنے والے ادارے رئاسۃ شؤون الحرمین کے ٹوئٹر اور انسٹاگرام اکاؤنٹس سے ایسی تصاویر شیئر کی گئی ہیں جنھیں اب تک حجراسود کی انتہائی باریک بینی سے بنائی گئی تصاویر میں شمار کیا جا رہا ہے ۔رئاسۃ شؤون الحرمین کے مطابق ‘فوکس سٹیک پینورما’ نامی فوٹوگرافی تکنیک کے ذریعے بنائی گئی ان تصاویر کی سات گھنٹے تک عکس بندی کی گئی اور ان تصاویر کو اکٹھا کرنے میں تقریباً 50 گھنٹوں کا وقت لگا ہے ۔اس ٹیکنالوجی کے ذریعے مختلف تصاویر کو جوڑ کر ایک انتہائی مستند تصویر بنائی جاتی ہے جس کی کوالٹی بہترین ہوتی ہے اور اس کے ذریعے تصویر کی باریکیوں پر بھی بخوبی نظر ڈالی جا سکتی ہے ۔اس پتھر کی وضع انڈے جیسی ہے جس میں کالے اور سرخ رنگ کا خوبصورت امتزاج ہے ۔ اس کا قطر تقریباً 30 سینٹی میٹر ہے اور یہ خانہ کعبہ کے جنوب مشرقی کونے پر دیوار کے ساتھ رکھا ہے ۔ان تصاویر کے سوشل میڈیا پر شیئر ہوتے ہی اکثر صارفین نے اس پتھر کی خوبصورتی کے حوالے سے تبصرے کیے ، کسی نے کہا کہ اللہ کا شکر ہے کہ اب میں حجر اسود کو سپر ریزولوشن میں دیکھ سکتا ہوں۔اس پتھر سے جڑی تاریخ دراصل مذہب اسلام سے بھی زیادہ قدیم ہے ۔ روایات کے مطابق یہ پتھر اس وقت جنت سے اتارا گیا تھا جب حضرت ابراہیم ؑ اور ان کے صاحبزادے حضرت اسماعیل ؑ ساتھ مل کر خانہ کعبہ کی تعمیر کر رہے تھے اور انھیں تعمیر مکمل کرنے کے لیے ایک پتھر کی ضرورت تھی۔

روزنامہ دنیا ایپ انسٹال کریں
Advertisement