نیوز الرٹ
  • بریکنگ :- 6روز قبل چین اور روس نے بھی ہماری حکومت کے حق میں بات کی،ذبیح اللہ مجاہد
  • بریکنگ :- قطر،ازبکستان اور دیگر ممالک نے بھی مثبت موقف اپنایا،ترجمان طالبان
  • بریکنگ :- پاکستان ہمارا ہمسایہ ملک ہے،ان کا موقف قابل تحسین ہے،ذبیح اللہ مجاہد
  • بریکنگ :- افغانستان کے ساتھ عالمی برادری کے روابط ضروری ہیں،ذبیح اللہ مجاہد
  • بریکنگ :- افغانستان کو تجارت اور اقتصادی امور میں ہمسایہ ممالک کی ضرورت ہے،ترجمان
  • بریکنگ :- توقع ہے ہمسایہ ممالک اپنا مثبت کردار جاری رکھیں گے،ترجمان طالبان
  • بریکنگ :- پنج شیر میں لڑائی ختم ہوچکی ہے،ترجمان طالبان ذبیح اللہ مجاہد
  • بریکنگ :- اگر کوئی لڑائی یا حملے کی خواہش رکھتاہے تو سخت جواب دیاجائےگا،ترجمان طالبان
  • بریکنگ :- افغانستان میں امن کے بعد ہماری ترجیح ہے کہ تجارت فروغ پائے،ذبیح اللہ مجاہد
  • بریکنگ :- افغانستان کو پشاور اور پاکستان کے دیگر علاقوں سے منسلک کیاجائےگا،ترجمان طالبان
  • بریکنگ :- سی پیک منصوبہ اہم ہے،تھوڑی تحقیق کی ضرورت ہے،ترجمان طالبان
  • بریکنگ :- چاہتے ہیں سی پیک میں شامل ہوں،ترجمان طالبان ذبیح اللہ مجاہد
  • بریکنگ :- پاکستان ہمارا پڑوسی ملک اور افغانوں کا دوسرا گھر ہے،ترجمان طالبان
  • بریکنگ :- لاکھوں افغان مہاجرین اب بھی پاکستان میں رہائش پذیر ہیں،ترجمان طالبان
  • بریکنگ :- ہماری زبان ،مذہب مشترکہ اور رسم ورواج بھی ایک جیسے ہیں،ترجمان طالبان
  • بریکنگ :- ہم ایک اسلامی ریاست قائم کرناچاہتےہیں،ترجمان طالبان
  • بریکنگ :- کشمیری ہمارے بھائی ہیں،ترجمان طالبان ذبیح اللہ مجاہد
  • بریکنگ :- عالمی برادری مقبوضہ کشمیر میں جاری بھارتی مظالم بند کرائے،ترجمان طالبان
  • بریکنگ :- کشمیری،میانمار اور فلسطینی بھائیوں کی سیاسی وسفارتی حمایت کریں گے،ترجمان طالبان
  • بریکنگ :- کئی ممالک نے امریکا اور عالمی برادری کے سامنے ہمارے حق میں آواز اٹھائی،ترجمان
  • بریکنگ :- بیشترمقامی عمائدین ،علمائے کرام اور مجاہدین ہمارے ساتھ ہیں،ترجمان طالبان
  • بریکنگ :- ہم کسی کے ساتھ جنگ نہیں چاہتے،ترجمان طالبان ذبیح اللہ مجاہد
  • بریکنگ :- پوری دنیا کے ساتھ بہتر تعلقات چاہتےہیں،ترجمان طالبان ذبیح اللہ مجاہد
Coronavirus Updates
اداریہ
WhatsApp: 0344 4450229

ڈینگی سے احتیاط، آگاہی کی ضرورت

ملک میں بارشوں کے حالیہ سلسلے کے بعد ڈینگی کیسز میں اضافے کا خطرہ مد نظر رکھنا چاہیے۔ ڈینگی مچھر تازہ پانی میں پرورش پاتا ہے اس لیے بارش کا موسم اس کی نشوونما کیلئے سازگار ماحول پیدا کرتا ہے ‘ مگر تھوڑی احتیاط سے اس خطرے سے بچاؤممکن ہے؛چنانچہ شہریوں کو اس سلسلے میں اپنی ذمہ داری ادا کرنی چاہیے۔ گھروں میں فریج‘ ایئر کولر اورباہر پڑے پرانے ساما ن میں کھڑا پانی ڈینگی مچھر کو پرورش  کا ماحول فراہم کرتا ہے ‘ عوام الناس کو اس خطرے سے آگاہی فراہم کرنا ضروری ہے۔یہ کام حکومتی سطح پر باقاعدگی کے ساتھ ہونا چاہیے۔

ماضی میں ڈینگی ملک میں صحت کے غیر معمولی خطرات کا موجب بن چکا ہے مگر بروقت اور مناسب اقدامات سے عوام میں آگاہی پیدا ہوئی اور حکومتی اداروں نے بھی اس معاملے میں کافی کام کیا‘ تاہم پچھلے برس سے اس جانب زیادہ توجہ نظر نہیں آتی۔ یہ درست کہ کورونا کا زیادہ بڑا خطر ہ حکام کی توجہ کا مرکز رہا ہے مگر ڈینگی جیسے موسمی خطرے کو بھی نظر انداز نہیں کرنا چاہیے۔ اس کام میں عوام کو ساتھ ملانا ہو گا‘ جب تک عوام اس معاملے میں ذمہ دارانہ کردار ادا نہیں کرتے ڈینگی کے خطرے کا تدارک ممکن نہیں۔ اس حوالے سے عوامی آگاہی کی مہم پورے ملک میں چلائی جانی چاہیے مگر ایسے علاقے جہاں کیسز زیادہ ہیں وہاں ڈینگی سرویلنس ٹیموں کو گھروں اور دیگر مقامات پر بھیجا جانا چاہیے ۔ 

 

روزنامہ دنیا ایپ انسٹال کریں
Advertisement