نیوز الرٹ
  • بریکنگ :- ٹوکیواولمپکس ہاکی فائنل،بیلجیئم نے آسٹریلیا کو شکست دے دی
  • بریکنگ :- بیلجیئم نے آسٹریلیا کو ہرا کر گولڈ میڈل جیت لیا
  • بریکنگ :- بیلجیئم نے آسٹریلیا کوشوٹ آؤٹ میں 2-3 سے ہرادیا
  • بریکنگ :- مقررہ وقت تک دونوں ٹیموں کےدرمیان مقابلہ 1-1گول سےبرابررہا
Coronavirus Updates

بجٹ میں 383 ارب کے نئے ٹیکس لگے، صرف حکومتی اے ٹی ایم کو فائدہ ہوگا : عباسی

بجٹ میں 383 ارب کے نئے ٹیکس لگے، صرف حکومتی اے ٹی ایم کو فائدہ ہوگا : عباسی

دنیا اخبار

حکومت ہیرا پھیری کررہی ، بجٹ میں کوئی نئی بات نہیں ،بچوں کے دودھ اورخوراک کی قیمتوں میں بھی اضافہ ہوگا ، 3 سال میں 50 لاکھ افراد بیروزگار ہوئے ، بجٹ میں یہ نہیں بتا یا کہ روز گارکون دیگا،حکومت برآمدات نہ بڑھا سکی

کراچی، لاہور (نیوز ایجنسیاں ،دنیا نیوز) مسلم لیگ ن نے کہا ہے کہ حکومت ہیرا پھیری کررہی ہے ، بجٹ میں 383 ارب روپے کے نئے ٹیکس لگائے گئے ، یہ اے ٹی ایم بجٹ ہے اس سے صرف حکومتی اے ٹی ایم کو فائدہ ملے گا،ٹیکس لگانے سے بچوں کے دودھ اورخوراک کی قیمتوں میں بھی اضافہ ہوگا۔مسلم لیگ ن کے سینئر نائب صدر اور سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے کہا ہے کہ شوکت ترین نے وہی بجٹ تقریر پڑھی جو پیپلزپارٹی کے وزیر خزانہ کی حیثیت سے پڑھی تھی۔کراچی میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے شاہد خاقان عباسی کا کہنا تھا کہ 1200ارب روپے کے نئے ٹیکس لگانے کے باوجود آٹھ سو ارب روپے کی اضافی رقم حاصل کی جاسکی، نئے بجٹ میں 383ارب روپے کے نئے ٹیکس لگائے جارہے ہیں۔ان کا کہنا تھا کہ یہ عوام کے پیٹ کاٹ کر جعلی ہدف پورے کرنا چاہتے ہیں، حکومت نمبروں کی ہیرا پھیری سے عوام کو دھوکا دینا چاہتی ہے ،آج وفاق اس بات پر انحصار کر رہا ہے کہ صوبے کام نہیں کریں گے اور بچت ہوگی۔رہنما ن لیگ نے کہا کہ ملکی تاریخ کی پہلی حکومت ہے جس کو جھوٹ بولنے میں شرم نہیں، اگلے بجٹ میں کوئی نیا وزیر خزانہ ہوگا،جو نئی باتیں کہے گا۔ان کا کہنا تھا کہ مسلم لیگ ن کی حکومت رہتی تو 2018 سے زیادہ گروتھ ہوتی،مسلم لیگ ن کی حکومت رہتی تو 370ارب روپے جی ڈی پی ہوتی،ن لیگ کے دور میں ساڑھے 7 ارب روپے کا خسارہ 5 سال میں تھا،موجودہ حکومت کا تین سال میں خسارہ 10 ارب سے زیادہ ہے ،وزیر خزانہ تقریر میں پچھلی حکومت پر ملبہ ڈالتے رہے ۔ سابق وزیراعظم نے کہا کہ تین سال میں موجودہ حکومت نے 15 ہزار ارب سے زائد روپے کا اضافی قرضہ لیا،تین سال میں 50 لاکھ آدمی بے روزگار ہوگئے ہیں۔بجٹ تجاویز میں کہیں لکھا ہوا ہے کہ روزگار کون مہیا کرے گا؟ یہ پاکستان کی تاریخ میں پہلی حکومت ہے جو جھوٹ بول کر کام چلارہی ہے ، حکومت روپے کی قدر کم کرنے کے باوجود برآمدات نہیں بڑھاسکی، پی ٹی آئی حکومت کے 3 سال میں خسارہ 10ہزار ارب سے بڑھ چکاہے ، جوحقائق پیش کیے ،چیلنج کرتاہوں کہ کوئی وزیراس کو جھٹلادے ۔

روزنامہ دنیا ایپ انسٹال کریں
Advertisement