نیوز الرٹ
  • بریکنگ :- کوئٹہ:وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال کاایوان میں اظہارخیال
  • بریکنگ :- یہ پہلی بارنہیں ماضی میں بھی عدم اعتمادکی تحریکیں آچکی ہیں،جام کمال
  • بریکنگ :- کوئٹہ:یہ سیاست کاحصہ ہےچلتاہے،وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال
  • بریکنگ :- جب حکومت میں ہوں توزیادہ ناراضگیاں ہوتی ہیں،جام کمال
  • بریکنگ :- تعلقات قائم رہیں گے،ہم ملتےجلتےرہیں گے،وزیراعلیٰ جام کمال
  • بریکنگ :- یہ سب سیاست کاحصہ ہےذاتیات تک نہیں جاناچاہیے،جام کمال
  • بریکنگ :- اپوزیشن کوساڑھے3سال سےگلےشکوےہیں،جام کمال
  • بریکنگ :- کوئٹہ:میں نہیں کہتاہم سب ٹھیک کررہےہیں،جام کمال
  • بریکنگ :- بلوچستان کےہرضلع میں کام ہورہاہے،وزیراعلیٰ جام کمال
  • بریکنگ :- کوئٹہ:سیاست میں کسی کواغوانہیں کیاجاتا،جام کمال
  • بریکنگ :- ناراض ارکان سےقلمدان واپس لےسکتےتھے،جام کمال
  • بریکنگ :- کسی کوناراض ہونےسےروک نہیں سکتے،وزیراعلیٰ جام کمال
  • بریکنگ :- رائےشماری کےروزہونےوالےفیصلےکوقبول کروں گا،جام کمال
  • بریکنگ :- کوئٹہ:میں استعفیٰ نہیں دوں گا،وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال
  • بریکنگ :- کوئٹہ:ثنابلوچ کاچیلنج قبول کرتاہوں،وزیراعلیٰ جام کمال
  • بریکنگ :- 2فیصدووٹ نہ ملےتوہمیشہ کیلئےسیاست چھوڑدوں گا،جام کمال
  • بریکنگ :- کوئٹہ:ثنابلوچ اپنی بات پرقائم رہیں،وزیراعلیٰ جام کمال
  • بریکنگ :- ارکان اسمبلی لاپتہ ہیں توان کےلواحقین تھانےجاکرمقدمہ درج کرالیں،جام کمال
  • بریکنگ :- لاپتہ ارکان کواسمبلی آنےدیاجائے،آپ کوان کاعلم ہے،اسپیکرکی رولنگ
  • بریکنگ :- دہرےمعیارمیں کسی چیزکوجانچنےکاپیمانہ ہوناچاہیے،جام کمال
Coronavirus Updates

بلوچستان سیاسی بحران، پرویز خٹک کی کو ششیں ناکام

 بلوچستان سیاسی بحران، پرویز خٹک کی کو ششیں ناکام

دنیا اخبار

گورنرظہورآغا ،وزیراعلیٰ ،ناراض ارکان کی اسلام آباد میں اہم ملاقاتیں ، کچھ دوست پہلے دن سے وزیر اعلیٰ بننا چاہتے تھے ، کام نہ کرنیکا تاثر غلط :جام کمال

اسلام آباد،کوئٹہ(دنیا نیوز ،سٹاف رپورٹر،سٹی رپورٹر) بلوچستان کا سیاسی بحران برقرار ، پرویز خٹک کی کو ششیں ناکام ہو گئیں ۔ بلوچستان میں سیاسی بحران برقرار ہے جبکہ گورنر بلوچستان ، ناراض ارکان اوروزیراعلیٰ جام کمال کی بھی اسلام آباد میں اہم ملاقاتیں ہوئیں ہیں ۔وزیر دفاع پرویز خٹک کی بلوچستان عوامی پارٹی کے قائم مقام صدر ظہور بلیدی سے ملاقات ہوئی۔ سپیکر عبدالقدوس بزنجو، سینیٹرمنظور کاکڑ، سینیٹرکہدہ بابر، سردار عبدالرحمان کھیتران، نصیب اللہ بازئی سمیت دیگر بھی موجود تھے ۔ذرائع کے مطابق وزیر دفاع نے ناراض اراکین سے اختلافات افہام تفہیم کے ساتھ حل کرنے کی درخواست کی، ناراض ارکان نے پرویز خٹک سے جام کمال کے مستعفی ہونے تک بات چیت سے انکارکردیا،انہوں نے کہا کہ مائنس جام کمال کے سوا کوئی آپشن قبول نہیں۔ وزیراعلیٰ کمال نے کہا کہ حیران ہوں جنرل سیکرٹری نے ظہور بلیدی کو قائم مقام صدر بنایا جبکہ صدر موجود ہے ۔ کچھ اراکین سے دستخط لیے گئے ہیں تو کچھ سے قسمیں لی گئیں۔کچھ دوست پہلے دن سے وزیر اعلیٰ بننا چاہتے تھے کام نہ کرنے کا تاثر غلط ہے ۔گورنر بلوچستان نے دو روز میں وزیراعظم عمر ان خان اور چیئرمین سینیٹ سے ملاقاتیں کی ہیں اور ان سے سیاسی صورتحال پر تبادلہ خیال کیا۔دوسری جانب کوئٹہ میں موجود ناراض ارکان نے بلوچستان عوامی پارٹی کے بانی سینیٹر سعید احمد ہاشمی سے ان کی رہائشگاہ پر ملاقات کی انہوں نے ناراض ارکان کے اعزاز میں ظہرانہ بھی دیا۔گورنربلوچستان سید ظہورآغا نے چیئرمین سینیٹ صادق سنجرانی سے ملاقات کی ملاقات میں جام کمال کے خلاف تحریک عدم اعتماد پر تبادلہ خیال کیاگیا۔بلوچستان عوامی پارٹی کے قائم مقام صدر میرظہوربلیدی نے وزیراعظم سے مداخلت کی اپیل کی اورکہاکہ وہ مثبت کرداراداکریں ۔

روزنامہ دنیا ایپ انسٹال کریں
Advertisement