ن لیگ پنجاب پارلیمانی پارٹی کا اجلاس آج جاتی امرا میں طلب

ن لیگ پنجاب پارلیمانی پارٹی کا اجلاس آج جاتی امرا میں طلب

لاہور(سیاسی رپورٹرسے ،سپیشل رپورٹر،دنیا نیوز) مسلم لیگ ن نے پنجاب اسمبلی کے لئے اپنی پارلیمانی پاور شو کرنے کیلئے آج جاتی امرا میں پارلیمانی پارٹی کااجلاس بلالیا ۔ سپیکر ،ڈپٹی سپیکر اوروزیراعلیٰ پنجاب کے انتخاب کیلئے حکمت عملی بھی مرتب کی جائے گی۔

 تفصیلات کے مطابق پنجاب میں حکومت سازی کے معاملے تیزی سے آگے بڑھنے لگے ، مسلم لیگ ن نے ارکان اسمبلی سے رابطے مکمل کرلیے ۔ مسلم لیگ ن کی نامزد وزیراعلیٰ پنجاب مریم نواز کی زیرصدارت پارلیمانی پارٹی کااجلاس ہوگا ،نومنتخب ارکان کے اعزاز میں ظہرانہ دیاجائے گا ۔ مسلم لیگ ن اپنے حمایت یافتہ ارکان کی مکمل طاقت کامظاہرہ کرے گی ، آزاد حیثیت میں مسلم لیگ ن میں شامل ہونے والے ارکان بھی اجلاس میں شریک ہوں گے ۔تمام ارکان اسمبلی کو پارلیمانی پارٹی کے اجلاس میں شرکت کے لئے ہدایات جاری کردی گئیں۔دوسری طرف مسلم لیگ (ن)کو پنجاب اور بلوچستان اسمبلی کی مزید دو ،دو نشستیں مل گئیں ، 4 آزاد ارکان نے شہبازشریف اور مریم نواز سے الگ الگ ملاقات میں پارٹی میں شمولیت کااعلان کیا ۔ شہباز شریف سے بلوچستان اسمبلی کے حلقہ پی بی 41 اور 51 سے آزاد حیثیت میں انتخاب جیتنے والے ولی محمد اور عبدالخالق خان نے ملاقات کی اور مسلم لیگ ن میں شمولیت کا اعلان کیا ۔ جعفر خان مندوخیل اور جمال شاہ کاکڑ بھی موجود تھے ۔شہبازشریف کاکہناتھا پاکستان کو انتشار نہیں استحکام کی ضرورت ہے ، آپ نے پاکستان کے استحکام کے لئے کردار ادا کیا جو لائق تحسین ہے ،مسائل لڑائی سے نہیں بات چیت اور مل کر چلنے سے ہی حل ہو سکتے ہیں۔دریں اثنائپی پی 180قصور سے احسن رضاخان اور پی پی 128جھنگ فور سے کرنل (ر)غضنفر قریشی بھی مسلم لیگ (ن)میں شامل ہو گئے ۔ نامزد وزیراعلیٰ مریم نواز سے احسن رضا اور کرنل (ر)غضنفر قریشی نے ملاقات کی ۔مریم نواز نے دونوں آزاد ارکان کا خیرمقدم کیا اور مبارکباد دی ۔ مریم نوازنے کہا آپ کی حمایت ملک کو تباہی سے ترقی کی طرف واپس لائے گی، انتشار ختم کرکے پاکستان کو استحکام کی طرف لیجاناچاہتے ہیں ، پنجاب کی ترقی اور عوام کو ریلیف دینے کی جامع حکمت عملی تیار کرلی ہے ۔

Advertisement
روزنامہ دنیا ایپ انسٹال کریں