نیوز الرٹ
  • بریکنگ :- جہانگیرترین کےجہازکی لینڈنگ کس طرف ہوگی؟صحافی کاسوال
  • بریکنگ :- دھندکاموسم ہےگاڑی کاسفرزیادہ محفوظ ہے،شاہ محمودقریشی کاجواب
  • بریکنگ :- پارٹی میں جمہوریت ہےسب کواظہاررائےکاحق ہے،وزیرخارجہ
  • بریکنگ :- اوکاڑہ: مہنگائی کم کرنےکی کوشش کررہےہیں،شاہ محمودقریشی
  • بریکنگ :- بلاول اسلام آباداورہم کراچی کی جانب مارچ کریں گے،شاہ محمود قریشی
  • بریکنگ :- سندھ بلدیاتی ایکٹ کیخلاف تمام جماعتیں کراچی کی طرف مارچ کریں گی،وزیرخارجہ
  • بریکنگ :- ہمارامقابلہ(ن)لیگ اورپیپلزپارٹی نہیں ،مہنگائی سےہے،وزیرخارجہ
Coronavirus Updates

نفسیاتی مسائل اور ذیابیطس میں گہرا تعلق دریافت

نفسیاتی مسائل اور ذیابیطس میں گہرا تعلق دریافت

ڈنمارک کے ماہرین نے طویل تحقیق کے بعد دریافت کیا کہ مختلف نفسیاتی مسائل میں مبتلا افراد ذیابیطس کا آسان شکار بھی ثابت ہوسکتے ہیں

کوپن ہیگن(نیٹ نیوز) یونیورسٹی آف سدرن ڈنمارک کی نینا لندیکلدے کی سربراہی میں یہ جامع تحقیق ڈنمارک اور ہالینڈ کے مختلف تحقیقی اداروں سے وابستہ ماہرین نے انجام دی جس کی تفصیلات ریسرچ جرنل ‘‘ڈائبیٹالوجیا’’ کے تازہ شمارے میں آن لائن شائع ہوئی ہیں۔ تحقیق کیلئے انہوں نے 245 مطالعات اور 32 تجزیات سے استفادہ کیا ۔ٹائپ 2 ذیابیطس کی شرح سب سے زیادہ نیند کی خرابی کا شکار افراد میں دیکھی گئی جو 40 فیصد تھی جبکہ نفسیاتی تناؤ کی وجہ سے کھانے میں بے اعتدالی برتنے والوں کیلئے یہ شرح 21 تھی۔ تحقیق کی روشنی میں ماہرین نے بطورِ خاص نیند کی خرابی سے خبردار کرتے ہوئے کہا کہ اس سے نہ صرف ذیابیطس بلکہ دل اور دماغ کی بیماریاں بھی لاحق ہوسکتی ہیں۔

روزنامہ دنیا ایپ انسٹال کریں
Advertisement