نیوز الرٹ
  • بریکنگ :- امریکی اخبارنیویارک ٹائمزکی پنج شیرکی موجودہ صورتحال سےمتعلق رپورٹ
  • بریکنگ :- پنج شیرمیں لڑائی ختم ہوچکی ہے،امریکی اخبار
  • بریکنگ :- پنج شیرمیں پاکستان کےملوث ہونےسےمتعلق الزامات جھوٹ تھے،امریکی اخبار
  • بریکنگ :- پنج شیرکی اکثرآبادی لڑائی سےقبل ہی علاقہ چھوڑگئی تھی،امریکی اخبار
  • بریکنگ :- پنج شیرکےمرکزبازارک میں شدیدجنگ کےآثارانتہائی کم ہیں،امریکی اخبار
  • بریکنگ :- کچھ عمارتوں کےشیشےٹوٹےہیں،لیکن بلڈنگ اسٹرکچرکونقصان نہیں ہوا،امریکی اخبار
  • بریکنگ :- طالبان نےپنج شیرکےمختلف علاقوں سےبھاری اسلحہ برآمدکیا،امریکی اخبار
  • بریکنگ :- طالبان وادی پنج شیرمیں کافی عرصےسےمتحرک تھے،امریکی اخبار
  • بریکنگ :- پنج شیرکےکچھ شہریوں نےبھی طالبان کےقبضےمیں مدددی،امریکی اخبار
  • بریکنگ :- طالبان نےاحمدشاہ مسعودکےمقبرےکی مرمت کی،نیویارک ٹائمز
  • بریکنگ :- طالبان نےمقبرےکی حفاظت کیلئےجنگجوبھی تعینات کیےہیں،امریکی اخبار
Coronavirus Updates

پولیس حکام جرائم پیشہ افراد کیخلاف ڈیجیٹل کارروائی کرنے میں تاحال ناکام

پولیس حکام جرائم پیشہ افراد کیخلاف ڈیجیٹل کارروائی کرنے میں تاحال ناکام

دنیا اخبار

ڈیڑھ برس قبل سابق آئی جی نے مقدمات کے اندراج سے تکمیل تک مانیٹرنگ یقینی بنانے کی ہدایات کی تھیں

فیصل آباد(خصوصی رپورٹر)سماجی برائیوں میں ملوث افراد کے خلاف کارروائی، مقدمات اور چالان کی تکمیل کرنے تک کے عمل کی ڈیجیٹل مانیٹرنگ کا خواب شرمندہ تعبیر نہ ہوسکا، دور جدید میں آئی ٹی کی اسٹیٹ آف دی آرٹ سہولیات کے باوجود پولیس حکام جرائم پیشہ افراد کیخلاف ڈیجیٹل کارروائی کرنے میں تاحال ناکام ہیں۔ تفصیل کے مطابق سماجی برائیوں کے خلاف کارروائی کرتے ہوئے مقامی پولیس اکثر منشیات فروشوں، جواریوں، قحبہ خانوں سے پکڑے جانیوالے افراد، پتنگ و ڈور سازی کا مکروہ دھندہ کرنے والے اور پتنگ بازی میں ملوث ملزموں کے ساتھ ساتھ ہوائی فائرنگ جیسے سنگین جرائم میں ملوث افراد کو گرفتار کرنے کے بعد مبینہ جانبداری کامظاہرہ کرتے ہوئے چھوڑ دیتی ہے اور بیشتر اوقات دوران تفتیش ان کو ریلیف مہیا کیا جاتا ہے جس کے نتیجے میں ایسے جرائم میں ملوث ملزم فوری طور پر ضمانت پر رہا یا مقدمے سے بری ہوکر دوبارہ مکروہ حرکات میں مشغول ہوجاتے ہیں جس پر ڈیڑھ برس قبل سابق آئی جی پنجاب کی جانب سے ضلعی پولیس حکام کو ہدایات جاری گئی تھیں کہ ایسے مقدمات کے اندراج سے تکمیل تک ڈیجیٹل مانیٹرنگ یقینی بنائیں اور ہر 15 روز بعد اس کی رپورٹ بھجوائی جائے لیکن تاحال پولیس کی جانب سے ان کیخلاف کارروائی کی ڈیجیٹل مانیٹرنگ نہیں کی جاسکی جس سے ملزمو ں کو تاحال ریلیف مل رہا ہے ۔

Advertisement
روزنامہ دنیا ایپ انسٹال کریں