منشیات کے عادی افراد کی بحالی کیلئے سینٹربنانے کافیصلہ

منشیات کے عادی افراد کی بحالی کیلئے سینٹربنانے کافیصلہ

کراچی (اسٹاف رپورٹر) اقوام متحدہ کے دفتر برائے منشیات اور جرائم (یو این او ڈی سی) کے کنٹری نمائندے جیریمی ملسم کی قیادت میں تین رکنی وفد نے چیف سیکریٹری سندھ ڈاکٹر محمد سہیل راجپوت سے ملاقات کی۔

ملاقات میں صوبے میں منشیات کے عادی افراد کی بحالی کے لیے ماڈل سینٹر کے قیام کا فیصلہ کیا گیا۔ اجلاس میں اتفاق کیا گیا کہ منشیات کے عادی افراد کی بحالی کے لیے ماڈل سینٹر مکمل طور پر حکومت سندھ کی طرف سے یو این او ڈی سی کی تکنیکی مدد سے چلایا جائے گا اور منشیات کے عادی افراد کی بحالی میں بین الاقوامی بہترین طریقوں پر عمل کیا جائے گا۔ اجلاس میں یو این او ڈی سی کے ارسلان ملک، سیکریٹری داخلہ اعزاز علی شاہ، سیکریٹری سوشل ویلفیئر ڈاکٹر شیریں مصطفی اور سیکریٹری صحت ذوالفقار علی شاہ نے شرکت کی۔ ملاقات کے دوران ڈاکٹر محمد سہیل راجپوت نے بتایا کہ اے این ایف سے تعاون کے نتیجے میں منگھو پیر اور ملیر میں دو منشیات کی بحالی کے مراکز کامیابی کے ساتھ قائم کیے گئے ہیں، جن میں صحت یاب ہونے کے خواہشمند 300 افراد کی رہائش کی گنجائش ہے، یو این او ڈی سی بحالی مرکز صوبے میں ایک معیار کے طور پر کام کرے گا، مرکز کے آپریشنز، پروٹوکول اور سروس کے معیارات کو منشیات کی لت کے علاج میں عالمی بہترین طریقوں کی عکاسی کرنے کے لیے ڈیزائن کیا جائے گا، دیگر نجی بحالی مراکز کو اس کی پیروی کرنے کی ترغیب دی جائے گی۔

روزنامہ دنیا ایپ انسٹال کریں