455 سروس سٹیشنوں پر پانی کا بے دریغ استعمال

455 سروس سٹیشنوں پر پانی کا بے دریغ استعمال

لاہور(شیخ زین العابدین)شہر لاہور میں 455 رجسٹرڈ سروس سٹیشنز پانی کا بے دریغ استعمال کر رہے ہیں، سروس سٹیشنز کو قانونی دائرہ کار میں لانے کے لیے واسا کی مبینہ کوتاہی سامنے آگئی۔

 جوڈیشنل کمیشن کے احکامات پر شہر میں 400 سروس سٹیشنز پر ری سائیکل پلانٹ لگائے گئے، ری سائیکل پلانٹس کی چیکنگ کے معاملے پر واسا نے گاڑیاں دھونے والے سروس سٹیشنز کو کھلی چھٹی دے دی گئی، واسا کے شعبہ ریونیو اور او اینڈ ایم ڈائریکٹوریٹس نے سروس سٹیشنز کی پالیسی پر چپ سادھ لی، واسا انتظامیہ کی چیکنگ نہ ہونے کے سبب سروس سٹیشنز ری سائیکل پلانٹس کی مانیٹرنگ بند ہونے کا انکشاف ہے ، واسا کے سروے کے مطابق شہر میں 360 سروس سٹیشن پر لگے ری سائیکل پلانٹ بند ہو چکے ہیں، ری سائیکل پلانٹ چل رہے ہیں یا نہیں، واسا لاہور کو کوئی علم نہیں، واسا انتظامیہ نے 2019 میں 200 سے زائد سروس سٹیشنز پر ری سائیکل پلانٹ لگوائے ، اب شہر کے 90 فیصد سروس سٹیشنز پر ری سائیکل پلانٹس بند ہوگئے ، واسا کا شعبہ ریونیو اور او اینڈ ایم سروس سٹیشن کی چیکنگ نہ کرسکا۔ مانیٹرنگ نہ ہونے کی وجہ سے بیشتر سروس سٹیشنز انتظامیہ نے ازخود پلانٹس بند کیے ،واسا نے سروس سٹیشنز پر ری سائیکل پلانٹس کو کبھی چیک ہی نہ کیا۔ا ایم ڈی واسا غفران احمد کا کہنا ہے کہ روزانہ کی بنیاد پر سروس سٹیشن کی چیکنگ اور کارروائی کی جائے گی، پہلی دفعہ بیس ہزار روپے کا چالان، دوسری مرتبہ سیل اور ایف آئی آر کرائیں گے۔

Advertisement
روزنامہ دنیا ایپ انسٹال کریں