عوام نوازشریف کا احتساب الیکشن کے دن کرینگے:پرویز خٹک

 عوام نوازشریف کا احتساب الیکشن کے دن کرینگے:پرویز خٹک

پشاور(دنیا مانیٹرنگ)تحریک انصاف پارلیمنٹیرینز کے سربراہ پرویز خٹک نے قائد ن لیگ نواز شریف کی واپسی پر تبصرہ کرتے کہا ہے کہ مجھے نہیں پتا ڈیل ہے یا نہیں مگر ایسا لگ رہا ہے جیسے نوازشریف ایک بادشاہ ہیں۔۔۔

 ان کے لیے جیلیں اور عدالتیں کھول دی گئیں، ان کی جو مرضی ہو گی وہ کریں گے مگر عوام ان کا احتساب الیکشن کے دن کریں گے ،ملک تباہ کرنے والے یہ سارے پرانے لوگ ہیں جو ہر بار الیکشن سے پہلے نمودار ہو جاتے ہیں،چیئرمین پی ٹی آئی  نے خود اپنے آپ کو نقصان پہنچایا، بچوں کو بدتمیز کر دیا، بلاول بھٹو اگر بوڑھوں کو آرام کا مشورہ دے رہے ہیں تو پہلے اپنے والد کو گھر بٹھائیں ، میں تو صرف اوپر اللہ سے مدد مانگتا ہوں۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے غیرملکی نیوز ویب سائیٹ کو انٹرویو دیتے ہوئے کیا۔ پرویز خٹک نے چیئرمین پی ٹی آئی پر تنقید کرتے کہاکہ وہ ہمیشہ صرف اپنی سنتے ہیں ،میں نے ان کو بہت قریب سے دیکھا ہے ، وہ صرف تقریر کرتے ہیں لیکن اس پر عمل نہیں کرتے ، وہ پاکستان آرمی کے خلاف انقلاب لانا چاہتے ہیں ، انہیں اپنی باتوں سے ہیپناٹائز کرنا آتا ہے ،وہ ایک کہانی سناتے ہیں تو لوگ اسے سچ سمجھتے تھے ۔ پاکستان تحریک انصاف پارلیمنٹیرینز کے سربراہ نے مزید کہا کہ میں نے خیبرپختونخوا میں اپنی مرضی سے حکومت چلائی اور اصلاحات لے کر آیا، چیئرمین پی ٹی آئی کو خواب میں نہیں پتا تھا ادھر کیا ہو رہا ،اگر انہوں نے اصلاحات لانا ہوتیں تو پنجاب میں لے کر آتے، میں نے بار بار انہیں کہا پنجاب میں نہ سہی آپ اسلام آباد میں تھانوں کا نظام ہی ٹھیک کردیں، حلقے میں 40 لاکھ ووٹرز ہوتے ہیں اور وہاں 3 ہزار لوگ جمع کرنے سے کسی کی مقبولیت میں اضافہ نہیں ہو جاتا ، الیکشن کے دن مقبولیت کا پتا چل جائے گا۔ پرویز خٹک نے کہا کہ جہانگیر ترین کی جماعت سمیت کسی سیاسی جماعت سے اتحاد ہو گا نہ ایسا کوئی فیصلہ کیا ہے تاہم کچھ اضلاع میں ایڈجسمنٹ کی باتیں ہو رہی ہیں،سکیورٹی ایشوز ضرور ہیں،اس سے پہلے بھی یہی حالات تھے مگر الیکشن ہوئے تھے ، اب بھی جو الیکشن کمیشن کا فیصلہ ہو گا، اس کے لیے ہم تیار ہیں۔

Advertisement
روزنامہ دنیا ایپ انسٹال کریں