حافظ آباد:یوریاکھاد کی مصنوعی قلت ،کسانوں کا احتجاج

حافظ آباد:یوریاکھاد کی مصنوعی قلت ،کسانوں کا احتجاج

حافظ آباد(نامہ نگار،نمائندہ دنیا )ضلع بھر میں کھاد کی مصنوعی قلت اور بلیک مارکیٹنگ عروج پر پہنچ گئی جبکہ ضلعی انتظامیہ مسئلے پر قابو پانے میں مکمل طور پر ناکام ہوگئی۔

ان خیالات کا اظہار کسان بورڈ پاکستان کے مرکزی نائب صدر امان اﷲچٹھہ نے ضلعی آفس میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے کہا کہ یوریا کھاد مقررہ نرخ 3750 روپے کے بجائے 5ہزار روپے تک فروخت ہورہی ہے جس کی وجہ سے کسان اور کاشتکار پریشان ہوکر رہ گئے ہیں ۔انہوں نے کہا کہ کھاد کی مصنوعی قلت اور ذخیرہ اندوزی کے باعث گندم کی پیداوار میں زبردست کمی کا خطرہ پیداہوچکا ہے ،اگر حکومت اور ضلعی انتظامیہ نے ایک ہفتہ میں کھاد کی مقررہ نرخوں پر فراہمی کو یقینی نہ بنایا تو کسان اور کاشتکار 11دسمبرسے سڑکوں پر نکل کر احتجاج کرنے پرمجبور ہوں گے ۔پریس کانفرنس سے ملک شوکت علی پھلروان، رائے حفیظ اﷲ،ملک غلام غوث اور محمد قاسم تارڑ نے بھی خطاب کیا۔

 

Advertisement
روزنامہ دنیا ایپ انسٹال کریں