نیوز الرٹ
  • بریکنگ :- افغانستان 40 سال کی جنگ میں تباہ ہوچکاہے،گلبدین حکمت یار
  • بریکنگ :- افغانستان کوعالمی امدادکی ضرورت ہے،گلبدین حکمت یار
  • بریکنگ :- کوئی ملک امدادبغیرشرائط کےنہیں دیتا،گلبدین حکمت یار
  • بریکنگ :- امریکاکارویہ امتیازی ہے،گلبدین حکمت یار
  • بریکنگ :- امریکاکےآلہ کارافغانستان میں اب بھی جنگ چاہتےہیں،گلبدین حکمت یار
  • بریکنگ :- میں سمجھتاہوں ایسےلوگوں سےمفاہمت نہیں کرنی چاہیے،گلبدین حکمت یار
  • بریکنگ :- پاکستان نےافغان مہاجرین کوپناہ دی،گلبدین حکمت یار
  • بریکنگ :- ماضی کی افغان حکومت میں پاکستان پرالزامات لگائےگئے،گلبدین حکمت یار
  • بریکنگ :- پنج شیرکےحوالےسےبھی پاکستان پرالزام لگایاگیا،گلبدین حکمت یار
  • بریکنگ :- افغانستان سےپاکستان کےخلاف پروپیگنڈاہوتارہاہے،گلبدین حکمت یار
  • بریکنگ :- سی آئی اےکاچیف افغانستان آتاہےتوشورنہیں مچایاجاتا،گلبدین حکمت یار
  • بریکنگ :- پاکستانی وفدافغانستان آتاہےتودنیامیں شورمچ جاتاہے،گلبدین حکمت یار
  • بریکنگ :- غیرملکی طاقتوں نےافغانستان میں غیرنمائندہ حکومتیں مسلط کیں،گلبدین حکمت یار
  • بریکنگ :- سابق صدراشرف غنی پیسےلےکرملک سےفرارہوئے،گلبدین حکمت یار
Coronavirus Updates

مسلسل سال سے روزانہ دریا میں غوطہ لگانے والا شہری

مسلسل سال سے روزانہ دریا میں غوطہ لگانے والا شہری

دنیا اخبار

ایک امریکی شخص کو ‘ دریا میں چھلانگ لگانے والے شخص’ کا باقاعدہ خطاب مل گیا ہے

مشی گن(نیٹ نیوز)کیونکہ وہ روزانہ بلاناغہ دریائے مشی گن میں غوطہ لگارہے ہیں۔ڈین او کونر کہتے ہیں کہ وہ شراب نوشی کے بعد دردِ سر اور دیگر کیفیات سے پریشان تھے اور علاج کے طور پر روزانہ دریا میں نہاتے ہیں اور یہاں سے جسمانی طور پر بہتر ہوکر باہرآتے ہیں۔ اب یہ حال ہے کہ وہ خون جمادینے والی سردی میں بھی یہاں آتے ہیں۔شروع میں 53 سالہ ڈین اوکونر کو کچھ عجیب لگا لیکن دریا میں نہانے کے بعد انہیں بہت اچھا محسوس ہوا۔ ان کا دل و دماغ بہت صاف اور ہلکا ہوگیا جس کے بعد ڈین نے دریا میں غوطہ لگانے کو اپنی عادت بنالیا۔ ڈین کی بیوی مارگریٹ نے بتایا کہ وہ موسیقار ہیں اور وبا کے بعد لاک ڈاؤن ہونے کے بعد افسردہ تھے ۔ اس کے بعد ڈین نے دریا میں سکون اور اطمینان تلاش کیا ہے ۔

روزنامہ دنیا ایپ انسٹال کریں
Advertisement