اسکول کالج اور مدارس میں پیغام پاکستان پروگرام شروع کرنے کا فیصلہ

اسکول کالج اور مدارس میں پیغام پاکستان پروگرام شروع کرنے کا فیصلہ

کراچی (اسٹاف رپورٹر)سندھ ہائر ایجوکیشن کمیشن کے تحت صوبے کے نوجوانوں میں مثبت سوچ کی تعمیر کے لیے پیغام پاکستان پروگرام شروع کیا جارہا ہے ۔پروگرام ریاستی اداروں کے تعاون اور اساتذہ کی مدد سے جامعات اور مدارس کے ساتھ ساتھ اسکول اور کالج کی سطح پر بھی متعارف کرایا جارہا ہے ۔

سندھ ایچ ای سی کے ڈائریکٹر جنرل ڈاکٹر نعمان احسن نے اپنے دفتر میں منعقدہ پریس کانفرنس میں بتایا کہ اس پروگرام کا مقصد پاکستان کے طلبہ اور نوجوانوں کو علمی و فکری بنیادوں پر قومی دھارے کے لیے راغب کرنا ہے ، جو طلبہ عصر حاضر کی تعلیم سے دُور ہیں ان میں مدارس کے طلبہ خاص طور پر شامل ہیں، انہیں بھی قومی دھارے میں لانے کے لیے یہ پروگرام مختلف جامعات میں کیے جائیں گے ۔ علاوہ ازیں مدرسہ اور یونیورسٹیز ایکسچینج پروگرام بھی شروع کیے جائیں گے ۔سندھ ایچ ای سی کے ڈائریکٹر جنرل ڈاکٹر نعمان احسن نے جامعہ کراچی میں 2 سال قبل ایک خود کش حملے کے واقعے کا ذکر کرتے ہوئے بتایا کہ پڑھے لکھے طبقے سے تعلق رکھنے والی خاتون کا برین واش کیا گیا اور خود کش دھماکا کروایا گیا،یہ اس لیے ہے کہ بہت سارے معاملات محض خیالات ہیں، ان سے حقیقت کا تعلق نہیں ہے ،اس لیے کوشش کی جائے گی کہ ایسے طلبہ تک رسائی حاصل کرکے انہیں حقیقت بتائی جائے ۔ پریس کانفرنس میں انہوں نے مزید کہاکہ پروگرام کے تحت مختلف سرگرمیوں کا انعقاد کیا جائے گا، اس منصوبے میں ہمارے ساتھ ریاستی ادارے اور این جی اووز کے علاوہ جامعات اور ان کے اساتذہ بھی شامل ہیں ۔

Advertisement
روزنامہ دنیا ایپ انسٹال کریں