دوکھرب کی سرکاری ونیم سرکاری اراضی کی جعلی منتقلی کا انکشاف

 دوکھرب کی سرکاری ونیم سرکاری اراضی کی جعلی منتقلی کا انکشاف

کراچی(این این آئی)کراچی میں دوکھرب کی سرکاری ونیم سرکاری اراضی کی جعلی منتقلی کا انکشاف ہوا ہے ، سرکاری افسران اور محکمہ مال کی ملی بھگت سے 3 لاکھ 28 ہزار کنال زمین کا فراڈ انتقال کے ذریعے منتقلی ہوئی۔

 دستاویزات کی مطابق نگران حکومت نے سپریم کورٹ کے حکم پرریکارڈ کی چھان بین کی سفارش کی تھی، 41 ہزار ایکڑقیمتی اراضی کی کراچی کے مختلف پوش اوردوردراز کے علاقوں میں جعلی منتقلی کی گئی۔سرکاری دستاویزات میں مزید انکشاف ہوا ہے کہ 2 ہزار ارب روپے کی مالیت کی جعلی منتقلی 2012 سے ہورہی تھی، سینئرممبر بورڈ سندھ نے تمام ریکارڈ سندھ نگران کابینہ کے سامنے رکھا تھا۔ہزاروں جعلی انتقال اورزمین کی فراڈ منتقلیاں سامنے آئی ہیں، ریونیوریکارڈ تبدیل کرنے والے افسران اورحکام کیخلاف سخت ایکشن کی سفارش کی گئی ہے نگراں کابینہ نے سفارش کی ہے کہ محکمہ مال تمام  کھاتوں کی چھ ماہ میں چھان بین مکمل کرے ۔

Advertisement
روزنامہ دنیا ایپ انسٹال کریں