نشتر ہسپتال،267مریضوں کی بینائی لوٹائی گئی

نشتر ہسپتال،267مریضوں کی بینائی لوٹائی گئی

ملتان(لیڈی رپورٹر) نشتر ہسپتال کے شعبہ امراض چشم نے بڑا اور منفرد اعزاز اپنے نام کر لیا۔۔۔

انسانیت کی خدمت میں اعلیٰ مثال قائم کرتے ہوئے میں اب تک 267نابینا مریضوں کی بینائی لوٹا دی گئی، نابینا پن کے شکار مزید 7 مریضوں کی گزشتہ روز کامیاب سرجری کے بعد بینائی لوٹا دی گئی ،لاکھوں روپئے مالیت کے کارنیا تنظیم (اپنا)نے سے عطیہ کئے ،نشتر ہسپتال کے علاوہ اب آنکھوں کے 150 بستروں پر مشتمل علیحدہ ہسپتال میں آئی بینک جلد فعال ہو گا جہاں آئی بینک سوسائٹی کا قیام عمل میں لایا جائے گا، تفصیل کے مطابق نشتر میڈیکل کالج کے پرنسپل اور ہسپتال کے شعبہ امراض چشم کے سربراہ پروفیسر ڈاکٹر راشد قمر راو کی کاوشوں کے باعث نشتر میڈیکل یونیورسٹی و ہسپتال میں نابینا پن کا شکار مریضوں کی بینائی لوٹانے کا سلسلہ جاری ہے پہوٹا کی جانب سے جولائی 2021 میں کارنیا ٹرانسپلانٹ کی باقاعدہ اجازت ملنے کے بعد نشتر ہسپتال سے تعلیم یافتہ گریجویٹس کی نجی تنظیم ایسوسیشن ایشن آف فزیشن آف پاکستان ڈیسنٹ آف نارتھ امریکا(اپنا) کے تعاون سے نشتر میڈیکل یونیورسٹی و ہسپتال کے شعبہ امراض چشم کے سربراہ پروفیسر ڈاکٹر راشد قمر راو اور انکی ٹیم نے اب تک 267کے قریب مستحق اندھے پن کا شکار مریضوں کی کارنئیل گرافٹ(کارنیا پیوندکاری) کامیابی سے مکمل کر چکے ہیں ،گزشتہ روز بھی اپنا تنظیم , این 24اور باالخصوص ڈاکٹر شاہد اسحاق خان (امریکہ) ڈاکٹر فواد ظفر(امریکہ) پروفیسر ڈاکٹر صادق تسنیم پروفیسر ڈاکٹر رفیق انجم کی جانب سے سے عطیہ کئے گئے ۔

 

Advertisement
روزنامہ دنیا ایپ انسٹال کریں