فتنے کو دوبارہ مسلط نہیں کرنے دینگے :فضل الرحمن

 فتنے کو دوبارہ مسلط نہیں کرنے دینگے :فضل الرحمن

لاڑکانہ (دنیا نیوز)جمعیت علمائے اسلام (ف)کے سربراہ مولانا فضل الرحمن نے کہاہے کہ ہم نے اس وقت کہا تھا ملک میں یہودی لابی لائی جا رہی ہے ، اسی لابی نے نوجوانوں کو گمراہ کیا۔

آج فتنہ مکافات عمل کا شکار ہے اور کبھی سر نہیں اٹھائے گا ، اب اس فتنے کو ملک پر دوبارہ مسلط نہیں کرنے دیں گے ،75 سال غلط قیادت کو منتخب کیا گیا ، نئے مستقبل کو تراشنا ہوگا، ہمیں الیکشن کیلئے پُرامن ماحول بھی چاہئے ۔لاڑکانہ میں طوفان اقصیٰ کانفرنس سے خطاب کرتے مولانا فضل الرحمن نے کہا پاکستان کا بچہ، بچہ غزہ کے مسلمانوں کے ساتھ شانہ بشانہ کھڑا ہے ، ہم غزہ کے بھائیوں کو تنہا نہیں چھوڑیں گے ،عرب ممالک کو غزہ کے بچے ، بچیوں کا خون پکار رہا ہے ،عرب ممالک کس طرح اسرائیل کو تسلیم کر رہے ہیں؟۔انہوں نے کہا نیب کا چہرہ بے نقاب ہو چکا ،پارلیمنٹ میں کہا تھا نیب کا خاتمہ کرو، ہمارے دوست پتا نہیں کس مصلحت کا شکار تھے ، کیا نیب جیسے ادارے کو رہنا چاہیے ؟۔ انہوں نے کہا ہمیں الیکشن چاہئیں لیکن الیکشن والا ماحول بھی تو دو تاکہ لوگ گھروں سے باہر نکل سکیں، امیدوار آزادی کے ساتھ الیکشن مہم چلا سکیں،الیکشن کمیشن، قانون نافذ کرنے والے اداروں کو سوچنا ہوگا، کیا ہم نے دہشت گردی پر کنٹرول حاصل کر لیا ؟۔

Advertisement
روزنامہ دنیا ایپ انسٹال کریں