پاکستان پر معاشی دباؤمسلط،ہماری مذہبی شناخت ختم کردی گئی:فضل الرحمٰن

پاکستان پر معاشی دباؤمسلط،ہماری مذہبی شناخت ختم کردی گئی:فضل الرحمٰن

پشاور (دنیا نیوز)جے یو آئی کے سربراہ مولانا فضل الرحمن نے کہا کہ گزشتہ حکومت کے فتنے کو ہم نے شکست دی، پاکستان پر معیشت کے حوالے سے دبائو مسلط کیا جارہا ہے۔

ہماری مذہبی شناخت ختم کردی گئی،مولانا فضل الرحمن نے کہا کہ جے یو آئی میں شمولیت اختیار کرنے والوں کو خوش آمدید کہتا ہوں، ہمارے لئے خوشی کا لمحہ ہے ، مہمند کے نامور خاندان نے باضابطہ طورپر جے یو آئی میں شمولیت کا اعلان کیا ہے ۔فضل الرحمان  نے کہا کہ پاکستان ہمارا گھر ہے ہم اس کو خوشحال دیکھنا چاہتے ہیں، پاکستان کی شناخت اسلامی ہونی چاہئے تھی، پاکستان پر معیشت کے حوالے سے دباؤ مسلط کیا جارہا ہے ، بھارت، افغانستان، ایران پر معاشی دباؤ نہیں ۔ بھارت، بنگلہ دیش پر مدارس کے حوالے سے کوئی دباؤ نہیں ، دینی مدارس کے حوالے سے دباؤ صرف پاکستان پر ہے ، الیکشن میں آپ کے ووٹ نے فیصلہ کرنا ہے ، کیا پھر آپ انہی قوتوں کے حوالے ملک کریں گے جن کا ایجنڈا کشمیر بیچنا اوراسرائیل کو تسلیم کرنا ہے ۔مولانا فضل الرحمان نے کہا کہ غزہ کے لوگوں نے بہت بڑی قربانی دی ، حماس نے مسئلہ فلسطین کو زندہ کردیا ہے ، کہاں ہے عالمی انسانی حقوق کی تنظیمیں؟ غزہ میں دو ماہ کے اندر16 ہزار لوگوں کو شہید کر دیا گیا، بیس سال تک افغانستان میں انسانیت کا قتل کیا گیا، امریکا نے عراق، لیبیا، شام کو برباد کیا۔ امریکا کے ہاتھوں پوری انسانیت کا خون ٹپک رہا ہے ، امریکا افغانستان سے شکست کھا کر بھاگا، اسے سپر پاورنہیں کہتے ۔

Advertisement
روزنامہ دنیا ایپ انسٹال کریں