نیوز الرٹ
  • بریکنگ :- گجرنالہ تجاوزات کیس،سپریم کورٹ کراچی رجسٹری میں سماعت
  • بریکنگ :- کراچی:گجرنالہ پرپیشرفت رپورٹ کہاں ہے؟چیف جسٹس گلزاراحمد
  • بریکنگ :- بورڈآف ریونیوکی جانب سےرپورٹ جمع کرائی ہے،ایڈووکیٹ جنرل سندھ
  • بریکنگ :- 258 ایکڑاراضی پرمتاثرین کومتبادل زمین مختص کردی،اے جی سندھ
  • بریکنگ :- کراچی:6 ہزار سےزائدگھربنائےجائیں گے،ایڈووکیٹ جنرل سندھ
  • بریکنگ :- کراچی:سندھ حکومت کےپاس بجٹ کی کمی ہے،ایڈووکیٹ جنرل
  • بریکنگ :- وزراکیلئےفنڈزہیں،عوام کیلئےنہیں،باقی سارےامورچلارہےہیں،چیف جسٹس
  • بریکنگ :- ابھی پیسےآئےنہیں،ساراجہاں لینےآگیا،جسٹس اعجازالاحسن
  • بریکنگ :- جب گاڑیاں خریدنی ہوتی ہیں تو پیسےآجاتےہیں،جسٹس اعجازالاحسن
  • بریکنگ :- اگرزلزلہ یاسیلاب آجائےتوپھرکیاکریں گے؟جسٹس اعجازالاحسن
  • بریکنگ :- کوئی آفت جائےتوکیاایک سال تک بجٹ کاانتظارکریں گے،جسٹس اعجازالاحسن
  • بریکنگ :- متاثرین کوگھردینےتک وزیراعلیٰ اورگورنرہاؤس الاٹ کردیتےہیں،چیف جسٹس
  • بریکنگ :- لوگوں کوکہتےہیں وزیراعلیٰ،گورنرہاؤس کےباہرٹینٹ لگالیں،چیف جسٹس
  • بریکنگ :- ورلڈبینک کے کتنےمنصوبےہیں مگرکچھ نہیں ہورہا،چیف جسٹس
  • بریکنگ :- جنہوں نےزمینیں الاٹ کیں،ان کیخلاف کیاایکشن لیا؟چیف جسٹس برہم
  • بریکنگ :- کراچی:یہ تو 40 سال پرانامسئلہ ہے،ایڈووکیٹ جنرل سندھ
  • بریکنگ :- آپ انتہائی غیرذمہ دارانہ بیان دےرہےہیں،آپ کی ترجیحات کچھ اورہیں،عدالت
  • بریکنگ :- جوپیسےسپریم کورٹ نےوصول کرائےآپ نےنظررکھ لی،وہ آپ کےنہیں،عدالت
  • بریکنگ :- ہم نے طےکرنا ہےکہ اس پیسےکاکیاکرنا ہے،جسٹس اعجازالاحسن
  • بریکنگ :- ایک ایک پیسہ سپریم کورٹ طےکریگی کہ کہاں لگےگا،جسٹس اعجازالاحسن
Coronavirus Updates

نیب : شہباز شریف کیخلاف نئی انکوائری کی منظوری

نیب : شہباز شریف کیخلاف نئی انکوائری کی منظوری

دنیا اخبار

سابق وزیراعلیٰ پر بہاولپور میں سرکاری زمین من پسندافراد کودینے کا الزام ، بورڈاجلاس میں بلیغ الرحمان ، سابق کمشنر سمیت 11 انکوائریزکی منظور ی

اسلام آباد(اپنے نامہ نگارسے )نیب کے ایگزیکٹو بورڈنے پراجیکٹ منیجر پسنی فش ہاربراتھارٹی منیر احمد وغیرہ کے خلاف ریفرنس دائر کرنے ، سابق وزیر انڈسٹریز اینڈ کامرس ڈیپارٹمنٹ حکومت بلوچستان میر عبد الغفور لہڑی اور دیگر،واپڈاواٹر ونگ اسلام آباد کے افسران ، اہلکاروں وغیرہ کے خلاف 5انویسٹی گیشنز،سابق وزیراعلیٰ پنجاب شہباز شریف وغیرہ،سابق ضلع ناظم نصیر آبادوغیرہ اور دیگر کے خلاف11انکوائریز شروع کرنے جبکہ رکن قومی اسمبلی مظفر گڑھ مخدوم زادہ سید باسط احمد سلطان اور دیگرکے خلاف عدم ثبوت پر انکوائری بندکرنے کی منظوری دے دی۔ نیب نے سابق وزیر اعلٰی پنجاب واپوزیشن لیڈر شہباز شریف کے خلاف سرکاری زمین ٹرانسفر کرنے پر نئی انکوائری بھی شروع کردی، نیب ایگزیکٹو بورڈ نے گزشتہ روز انکوائری کی باقاعدہ منظوری دے دی، ذرائع کاکہناہے کہ شہبازشریف پر بہاولپور سیٹلائٹ ٹائون میں سرکاری زمین من پسند افراد کو ٹرانسفر کرنے کا الزام ہے ، شہبازشریف نے وزیراعلٰی پنجاب کے عہدہ کا ناجائز استعمال کرکے سرکاری ز مین ٹرانسفر کروائی،شہبازشریف کے ساتھ نیب نے سابق رکن قومی اسمبلی بلیغ الرحمان اور سابق کمشنر عاطف کے خلاف بھی انکوائری شروع کردی ہے ۔ چیئرمین نیب جسٹس(ر)جاوید اقبال کی زیرصدارت نیب کے ایگزیکٹو بورڈ کا اجلاس ہوا جس میں پراجیکٹ ڈائریکٹرپسنی فش ہاربراتھارٹی منیر احمد اور دیگر کے خلاف بدعنوانی کاریفرنس دائرکرنے کی منظوری دی گئی۔نیب کے مطابق ملزمان پر مبینہ طور پر اختیارات کے ناجائز استعمال سمیت سرکاری فنڈز میں خورد بردکا الزام ہے ،قومی خزانے کو 412.18 ملین روپے کا نقصان پہنچا۔ مخدوم زادہ سید باسط احمد سلطان رکن قومی اسمبلی مظفر گڑھ اور دیگر،میسرز فاطمہ گروپ آف کمپنیز کے ڈائریکٹرز، سی ای اوز اور دیگر کے خلاف انکوائریز عدم ثبوت کی بنیاد پر بند کرنے کی منظوری دی گئی،ایگزیکٹو بورڈ نے میر عبد الغفورلہڑی سابق وزیر انڈسٹریز اینڈ کامرس بلوچستان اور دیگر،نیشنل ہائی ویز اتھارٹی ضلع خضدار کے افسران ،ا ہلکاروں ،کوئٹہ ڈ ویلپمنٹ اتھارٹی کے افسران ،اہلکاروں ،فیڈرل لینڈ کمیشن ریونیو ڈیپارٹمنٹ تحصیل ہارون آباد کے افسران ،اہلکاروں ،واپڈاواٹر ونگ اسلام آباد کے افسران،اہلکاروں کے خلاف انویسٹی گیشنز کی منظوری دی ۔ ایگزیکٹو بورڈنے 11 انکوائریز کی منظوری بھی دی جن میں سابق وزیر اعلیٰ پنجاب،سابق ایم این اے ، سابق کمشنربہاولپور اور دیگر،کوئٹہ ڈویلپمنٹ اتھارٹی کے افسران،اہلکاروں ،سکندر عمرانی سابق ضلعی ناظم نصیر آباداور دیگر،علی احمد مینگل سابق سیکرٹری سی اینڈ ڈبلیو ڈیپارٹمنٹ کوئٹہ اور دیگر،پاکستان سٹیٹ آئل کے اہلکاروں ودیگر، بلوچستان ریونیو اتھارٹی کوئٹہ کے افسران،اہلکاروں، بلوچستان ڈویلپمنٹ اتھارٹی ضلع جعفرآباد کی انتظامیہ اور دیگر،محکمہ جنگلات جھل مگسی ضلع جعفر آباد کی انتظامیہ اور دیگر،قیصر شبیر،فیصل شبیر ڈائریکٹرز میسرز شجاع آباد آئل ملز،میسرز شبیر فیڈ ملز اور میسرز شجاع آباد ویونگ ملز ،وائس چانسلرخواجہ فرید یونیورسٹی رحیم یار خان اور دیگر،ایڈمنسٹریٹر ،کمشنر میٹرو پولیٹن کارپوریشن ملتان اور دیگرکے خلاف انکوائریز کی منظوری شامل ہے ،اجلاس میں دائود خلجی سابق ڈپٹی کمشنر کوئٹہ اور دیگر،نواب محمد خان شاہوانی وزیرسروسز اینڈ جنرل ایڈمنسٹریشن ڈیپارٹمنٹ بلوچستان کے خلاف انکوائریزقانون کے مطابق اینٹی کرپشن بلوچستان کو بھیجنے کی منظوری دی گئی ۔اس موقع پر چیئرمین نیب نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ میگاکرپشن مقدمات کے ملزمان کو قانون کے مطابق منطقی انجام تک پہنچانا نیب کی ترجیح ہے ،نیب نے 3سال سے زائد عرصے میں 533 ارب روپے بدعنوان عناصر سے برآمدکیے ۔ نیب بزنس کمیونٹی کی ملک کی ترقی کے لیے خدمات کو قدر کی نگاہ سے دیکھتا ہے ۔ نیب کے 1273 ریفرنسز احتساب عدالتوں میں زیر سماعت ہیں جن کی مالیت 1300 ارب روپے ہے ۔

روزنامہ دنیا ایپ انسٹال کریں
Advertisement