نیوز الرٹ
  • بریکنگ :- ہرتھانےکاپولیس بجٹ منظورہوتاہے،فروغ نسیم
  • بریکنگ :- منظورشدہ بجٹ تھانے کونہیں دیاجاتا،فروغ نسیم
  • بریکنگ :- تھانیدارکے پاس قلم اورسیاہی کےپیسے نہیں ہوتے،فروغ نسیم
  • بریکنگ :- یقینی بنایا ہے کہ فنڈتھانےکوہی دیاجائےگا،فروغ نسیم
  • بریکنگ :- شواہد کی ریکارڈنگ کیلئےکئی دن درکار ہوتے ہیں،فروغ نسیم
  • بریکنگ :- انگلینڈمیں شواہدجمع کرنےکیلئےلائیوریکارڈنگ ہوتی ہے،فروغ نسیم
  • بریکنگ :- بیرون ملک یاشہررہنےوالوں کےبیان ویڈیولنک کےذریعے ریکارڈہوں گے،فروغ نسیم
  • بریکنگ :- ان کیسز پر توجہ دی جائے گی جن میں شواہدموجود ہوں گے،فروغ نسیم
  • بریکنگ :- عادی مجرموں سے پلی بارگین نہیں کی جائےگی،فروغ نسیم
  • بریکنگ :- 5سال کی سزاپانےوالا 20 سال تک سزاکاٹتارہتا ہے،فروغ نسیم
  • بریکنگ :- اس نظام میں جج فیصلہ کرےگاجرم کی نوعیت کیا ہے،فروغ نسیم
  • بریکنگ :- پلی بارگین چھوٹے جرائم کیلئے ہے،فروغ نسیم
  • بریکنگ :- مقصد یہ ہےبڑےجرائم پرتوجہ دی جاسکے،فروغ نسیم
  • بریکنگ :- لوئرکورٹس میں وکلاکےالتوالینےسےفیصلوں میں تاخیرہوتی ہے،فروغ نسیم
  • بریکنگ :- گواہوں کے تحفظ کی بھی پالیسی بنادی گئی ہے،فروغ نسیم
  • بریکنگ :- وزیراعظم کومحسوس ہوایہ کام وزارت قانون کرسکتی ہے،فروغ نسیم
  • بریکنگ :- تمام اسٹیک ہولڈرزسےمشاورت کرکےمسودہ تیارکیاگیا،فروغ نسیم
  • بریکنگ :- منگل کومسودہ کابینہ میں پیش کیاجائےگا،فروغ نسیم
  • بریکنگ :- مسودہ پارلیمان میں پیش کیاجائےگا،فروغ نسیم
  • بریکنگ :- اپوزیشن سیاست نہ کرے،اس قانون کوپاس کرے،فروغ نسیم
Coronavirus Updates

لاہور ضمنی الیکشن :پیپلز پارٹی ہدف حاصل کرنے میں کامیاب

لاہور ضمنی الیکشن :پیپلز پارٹی ہدف حاصل کرنے میں کامیاب

عام انتخابات سے چھ گنا زیادہ ووٹ حاصل کرکے غیر معمولی کارکردگی دکھائی

اسلام آباد (طارق عزیز)لاہور کے حلقہ این اے 133کے ضمنی الیکشن میں پیپلز پارٹی اپنا ہدف حاصل کرنے میں کامیاب رہی، عام انتخابات سے چھ گنا زیادہ ووٹ حاصل کر کے غیر معمولی کارکردگی دکھائی، پیپلز پارٹی کی اعلیٰ قیادت نے 30 ہزار ووٹوں کا ٹارگٹ مقرر کیا تھاجو آسانی سے حاصل کر لیا گیا جس سے اس بات کا عندیہ ملا ہے کہ پیپلز پارٹی پنجاب میں آئندہ الیکشن میں خاطر خواہ ووٹ،نشستیں حاصل کر سکتی ہے اس مقصد کے لئے الیکٹ ایبلز کو پیپلز پارٹی میں لانے کی کوشش کی جارہی ہے ۔ رپورٹ کے مطابق پیپلز پارٹی نے این اے 133 کے بائی الیکشن میں 30 ہزار ووٹ کا ٹارگٹ مقرر کیا تھاجبکہ 2018 کے عام انتخابات میں پیپلز پارٹی نے 5585 وو ٹ حاصل کئے تھے ۔ آصف زرداری نے اس الیکشن میں ذاتی دلچسپی لی اور سابق وزیر اعظم راجہ پرویز اشرف کو انتخابی مہم کی ذمہ داری سونپی جبکہ پلوشہ خان اور دیگر ارکان پارلیمنٹ ، پارٹی عہدیدار ان کی معاونت کے لئے مہم کے دوران موجود رہے ۔ دلچسپ امر یہ ہے کہ کم ٹرن آئوٹ اور آدھے ووٹ حاصل کرنے کے باوجود ن لیگ کی برتری میں دو ہزار کا اضافہ ہوا ، پرویز ملک نے گزشتہ الیکشن میں 12 ہزار کی لیڈ سے کامیابی حاصل کی تھی جبکہ ضمنی الیکشن میں ان کی اہلیہ شائستہ پرویز نے یہ الیکشن تقریباً 14 ہزار کی لیڈ سے جیتا ہے ۔

روزنامہ دنیا ایپ انسٹال کریں
Advertisement