سالگرہ پر بچے چاہتے ہیں کچھ خاص!

تحریر : شازیہ کنول


بچوں کو اس کائنات کی سب سے خوبصورت اور معصوم مخلوق کہا جاتا ہے ۔سب کیلئے ہی اپنے بچے بہت خاص ہوتے ہیں اور بچوں کیلئے خاص ہوتا ہے ان کا جنم دن۔جب وہ سمجھتے ہیں کہ گھر والوں کو سب کام چھوڑ کر صرف ان کی تیاری پر دھیان دینا چاہئے۔ بچوں کی سالگرہ کیلئے سجاؤٹ میں آپ ان تمام چیزوں کی فہرست بنائیں جن میں آپ کے بچوں کی دلچسپی شامل ہو تاکہ وہ اپنے اس خوبصورت دن کو یادگار بنا سکیں۔

 عموماً بچوں میں یہ خواہش زیادہ پائی جاتی ہے کہ وہ اپنی سالگرہ کے دن اپنے دوستوں کے ساتھ مل کر اپنی دلچسپی کا سامان کریں،اور ایک ماں سے زیادہ بچوں کی خوشی کا خیال کون رکھنا چاہے گا؟۔آئیے چند طریقوں کے بارے میں جانتے ہیں جو آپ کے بچوں کی زندگی کے خاص دن کو اور بھی خاص بنا دیں۔ 

آپ اپنے بچوں کی سالگرہ کیلئے سجاوٹ میں یہ طریقہ بھی اپنا سکتے ہیں کہ گہرے رنگ کا پلاسٹک کا میز پوش لیں اور پھر اس پر بچوں کی سالگرہ کے حوالے سے کوئی خاص پیغام لکھیں۔ اس کے بعد اسے پٹیوں کی صورت میں کاٹ کر دروازے کی چوکھٹ پر کسی مضبوط چھڑی کے ساتھ لٹکا دیں۔ ایسے میں بچے جب بھی دروازے سے گزریں گے تو بے حد خوشی محسوس کریں گے۔ کیونکہ سالگرہ میں بچوں کے پسندیدہ رنگوں اور کارٹون کریکٹرز کی بنی چیزوں سے بچے زیادہ لطف اندوز ہوتے ہیں۔ 

بچوں کی سالگرہ پہ دیئے جانے والے تحائف کو ایک نئی تکنیک کے ساتھ بھی پیک کر سکتے ہیں۔ آپ تحفے کو سفید یا برائون آرٹ پیپر میں پیک کریں اور پھر بچوں کی پسند کی مناسبت سے مختلف ڈیزائن کے سٹیکرز اور تصویریں لگا کر اس پر اپنی طرف سے خاص پیغام بھی لکھ دیں۔ اس طرح تحفہ نہ صرف خوبصورت دکھائی دے گا بلکہ یہ تحفہ کھولنے والے کو بھی پرمسرت احساس بخشے گا۔ 

بچوں کی سالگرہ پر آپ صبح کے وقت انہیں پرمسرت احساس دلانے کیلئے ان کے جاگنے سے پہلے مختلف رنگوں میں غبارے پھلا کر ان کے ساتھ دھاگا باندھ لیں اور دھاگے کو کسی ٹوفی یا چاکلیٹ سے باندھ کر بیڈ کے ساتھ ہی فرش پر رکھ دیں جس سے غبارے بیڈ سے ا وپر کی جانب اٹھتے ہوئے نظر آئیں۔ بچے جب صبح نیند سے جاگیں گے تو خوشی سے پھولے نہیں سمائیں گے۔ 

آپ بچوں کی سالگرہ کیلئے کیک رکھنے والی میز پر رکھی گئی دوسری چیزوں کو بھی خوبصورتی کے ساتھ سجا سکتی ہیں۔ اس کیلئے آپ پلاسٹک کے گلاس یا ٹرے پر گوند کی مدد سے مختلف رنگ اور ڈیزائن کے نگ اور مصنوعی بلب لگا لیں۔ اس سے نہ صرف میز کی خوبصورتی میں مزید اضافہ ہوگا بلکہ یہ چیزیں دیکھنے والے کی توجہ کا بھی مرکز بنیں گی۔ 

بچوں کی سالگرہ پر کمرہ کو سجانے کیلئے آپ پارٹی کی تھیم کے مطابق کچھ رنگین فوٹو فریم خرید کر ان میں اپنے بچوں کی تصویریں لگا کے دیوار پر لٹکا دیں یا پھر سائیڈ پر پڑی ہوئی فوٹو فریمز کو میز پر رکھ دیں، ان کو دیکھ کر بچے بے حد خوش ہوں گے۔ اگر آپ فوٹو پلیٹس پر بچوں کی پسند کے مطابق مزید نقش و نگار کرنا چاہتی ہیں تو وہ بھی کر سکتی ہیں۔ 

اس کے علاوہ بچوں کی سالگرہ پر ان کے برتھ ڈے کیک کا انتخاب بچوں کی پسند کے مطابق کریں۔ اس فلیور کے کیک کا آرڈر کریں جو کہ آپ کے بچے زیادہ پسند کرتے ہیں۔ کیک آرڈر کرتے ہوئے اس بات کا بھی خیال رکھیں کہ کیک کا رنگ اور اس کی بناوٹ گھر کی سجاوٹ سے مماثلت رکھتے ہوں۔ 

آپ کیک رکھنے والی میز پر ایک بڑے سے مرتبان میں ٹوفیاں، چھوٹے خوبصورت کھلونے اور چاکلیٹ وغیرہ ڈال کر مرتبان کو رنگ برنگے موتیوں اور دوسری چھوٹی اشیا سے بھی بھر سکتی ہیں۔ 

بچوں کی سالگرہ میں آئے ہوئے دوسرے بچوں اور بڑوں کے لئے حفاظتی اقدام کے طور پر گھر یا کسی دوسری جگہ پر کیے گئے انتظامات میں اس بات کا خاص خیال رکھیں کہ بجلی کی تاروں کو احتیاط کے ساتھ اس طرح لگائیں کہ مہمان ان سے محفوظ رہ کر نہ صرف بھرپور انداز میں بے فکری سے شرکت کریں بلکہ پارٹی سے بھی لطف اندوز ہو سکیں۔

 

روزنامہ دنیا ایپ انسٹال کریں

T-20 کرکٹ کا سنسنی خیز فارمیٹ

آئی سی سی ٹی 20 ورلڈکپ 2024ء کے آغاز میں 6 روز باقی رہ گئے،انٹرنیشنل کرکٹ کونسل یکم جون2024ء سے کیریبین اور ریاست ہائے متحدہ امریکہ میں مردوں کے ٹی 20 ورلڈ کپ کے نویں ایڈیشن کی میزبانی کر رہی ہے۔ٹی 20، کرکٹ کا سب سے دلچسپ اور سنسنی خیز فارمیٹ ہے، قارئین کیلئے ٹی 20ورلڈکپ کی مختصر تاریخ پیش خدمت ہے۔

بھیڑ اور بھیڑیا

بھیڑیا اپنے گھر میں بیٹھا آرام کر رہا تھا جب اسے باہر سے اونچی ،اونچی آوازیں آئیں۔پہلے تو وہ آنکھیں موندے لیٹا رہا لیکن جب شور مسلسل بڑھنے لگا تو اس نے سوچا باہر نکل کر دیکھناتو چاہیے کہ آخر ہو کیا رہا ہے۔گھر سے باہر جا کر دیکھا تو سامنے 2 بھیڑیں کھڑی آپس میں لڑ رہی تھیں۔

سچی توبہ

خالد بہت شرارتی بچہ تھا۔ سکول اور محلے کا ہر چھوٹا بڑا اس کی شرارتوں سے تنگ تھا۔ وہ جانوروں کو بھی تنگ کرتا رہتا ، امی ابو اسے سمجھاتے مگر خالد باز نہ آتا۔

ذرامسکرائیے

اُستاد(شاگرد سے) انڈے اور ڈنڈے میں کیا فرق ہے؟ شاگرد: ’’کوئی فرق نہیں‘‘۔ اُستاد: ’’وہ کیسے‘‘؟شاگرد: ’’دونوں ہی کھانے کی چیزیں ہیں‘‘۔٭٭٭٭

پہیلیاں

مٹی سے نکلی اک گوری سر پر لیے پتوں کی بوری جواب :مولی٭٭٭٭

ادائیگی حقوق پڑوسی ایمان کا حصہ

اسلام کی تعلیمات کا خلاصہ دو باتیں ہیں۔اللہ تعالیٰ کی اطاعت و بندگی اور اللہ تعالیٰ کے بندوں کے ساتھ حسن سلوک۔ اسی لیے جیسے شریعت میں ہمیں اللہ تعالیٰ کے حقوق ملتے ہیں، اسی طرح ایک انسان کے دوسرے انسان پر بھی حقوق رکھے گئے ہیں۔