نیوز الرٹ
  • بریکنگ :- کراچی:شہرکےمختلف علاقوں میں کومبنگ آپریشن
  • بریکنگ :- کراچی:ضلع ویسٹ سے2منشیات فروش گرفتار،ایس ایس پی سہائی عزیز
  • بریکنگ :- ملزموں کی سعید اورفیاض کےنام سے شناخت،ایس ایس پی سہائی عزیز
  • بریکنگ :- ضلع ویسٹ سےپولیس نے 45 مشتبہ افرادکوحراست میں لیا،ایس ایس پی
  • بریکنگ :- کٹی پہاڑی 3اورخمیسوگوٹھ سےایک منشیات فروش گرفتار،ایس ایس پی سینٹرل
  • بریکنگ :- ملزموں سے6کلوچرس،ہیروئن اوردیگرمنشیات برآمد،ایس ایس پی
  • بریکنگ :- متعددمشتبہ افرادکوحراست میں لےکرچھان بین کی جارہی ہے،ملک مرتضیٰ
  • بریکنگ :- کراچی:سچل میں 60افرادکی بائیومیٹرک تصدیق،12افرادگرفتار،پولیس
  • بریکنگ :- کراچی:گرفتارافرادمیں 2سے گٹکابرآمد،پولیس
  • بریکنگ :- کراچی:کورنگی سےمنشیات فروشوں سمیت 7ملزم گرفتار،ایس ایس پی
Coronavirus Updates

امریکا کے جلد بازی میں انخلاء سے سکیورٹی کی بدترین صورتحال ہے: اشرف غنی

دنیا

کابل: (ویب ڈیسک) افغان صدر اشرف غنی نے ملک میں طالبان کی طرف سے بڑھتے ہوئے کنٹرول کی ذمہ داری امریکا پرڈال دی اور الزام لگاتے ہوئے کہا کہ جلدبازی میں انخلا کے نتیجے میں سکیورٹی کی بدترین صورتحال ہے۔

افغان پارلیمنٹ سے خطاب کے دوران افغان صدر نے کہا کہ جو موجودہ صورتحال ہے اس کی ایک ہی وجہ ہے کہ امریکا نے جلدبازی میں افغانستان سے انخلا کیا۔امریکی مکمل انخلا کے سنگین نتائج ہوں گے۔

دوسری جانب افغان آرمی نے بتایا کہ جنوبی اور مغربی حصے کے تین صوبوں میں سیکیورٹی کی صورتحال ’انتہائی نازک‘ ہے جہاں طالبان اور افغان فورسز کے مابین جھڑپیں تیز ہوچکی ہیں۔

گزشتہ روز بھی افغان صدر اشرف غنی نے ڈیجیٹل کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا تھا کہ طالبان افغان امن عمل سے متعلق جھوٹ بول رہے ہیں وہ افغانستان میں سیکیورٹی کی صورتحال تبدیل نہ ہونے تک امن عمل میں شامل نہیں ہوں گے۔ افغانستان میں سیکیورٹی کی صورتحال اگلے چھ ماہ میں تبدیل ہوجائے گی اور افغان شہروں کی سلامتی ان کی ترجیح ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ طالبان تبدیل نہیں ہوئے، وہ امن نہیں چاہتے یا تو ملک کی ترقی نہیں چاہتے اور طالبان نے باغی گروپوں کو ملک میں داخل ہونے کی اجازت دی۔ طالبان ہمارے لیے ماضی جیسا مستقبل بنانا چاہتے ہیں۔

Advertisement
روزنامہ دنیا ایپ انسٹال کریں