ماہ صیام میں رمضان بازار لگانے کا معاملہ سست روی کا شکار

لاہور: (دنیا نیوز) ماہ صیام میں 13 روز باقی ہیں لیکن رمضان بازار لگانے کا معاملہ سست روی کا شکار ہے۔

ذرائع کے مطابق افسران کو تاحال رمضان بازار لگانے کا تحریری مراسلہ نہ مل سکا،9ارب کا ریلیف پیکج رمضان بازار کے لئے فراہم کیا جائے گا، سستے رمضان بازاروں میں اشیائے خورونوش کے ریلیف کیلئے 9 ارب روپے مانگے گئے۔

پنجاب میں 311 رمضان بازار لگائے جائیں گے، لاہور کے 31 رمضان بازار لگانے کے اخراجات کا تخمینہ 85 کروڑ روپے ڈیمانڈ کیا گیا، آٹے اور چینی پر 7 ارب 50 کروڑ روپے کے ریلیف پیکج کے اخراجات وفاقی حکومت برداشت کرے گی، سبزیوں اور پھلوں پر 3 ارب روپے سبسڈی دی جائے گی۔

کمشنر لاہور ڈویژن محمد علی رندھاوا کا کہنا ہے حکومتی پالیسی کے مطابق چلیں گے، شہریوں کو ریلیف دینا اولین ترجیحات میں شامل ہے۔

 

Advertisement
روزنامہ دنیا ایپ انسٹال کریں