سردیوں میں جلد کی حفاظت

تحریر : ڈاکٹر بلقیس


سردی میں اپنی اور بچوں کی صحت کی حفاظت کرنا آسان کام نہیں، کھانسی، نزلہ، زکام، گلے کی خرابی، سستی، تھکاوٹ، پیر کی جلد کا پھٹ جانا عام مسائل ہیں ۔اس موسم میں ہماری جلد خشک اور خارش زدہ سی ہو جاتی ہے۔ کچھ خواتین سردی کے موسم میں رنگت متاثر ہونے کی شکایت کرتی ہیں، معاملہ یہ ہے کہ خشک جلد، سورج کی شعاعوں کا اثر بہت تیزی سے قبول کرتی ہے، اس لئے نازک اور نرم و ملائم جلد جھلس جاتی ہے اور سیاہ پڑنے لگتی ہے۔ سردی کے موسم میں نوجوان لڑکیوں کا سب سے بڑا مسئلہ ہی جلد کی حفاظت ہے۔

سردی میں جلد کے امراض بھی ابھر کر سامنے آتے ہیں۔ ان سے بچنے کیلئے احتیاط اور تدبیر سب سے اہم ہے ساتھ علاج بھی ضروری ہے۔ 

ایگزیما

سردی میں ایگزیما بڑھ جاتا ہے، اس مسئلے سے دوچار افراد کو بہت زیادہ احتیاط کی ضرورت ہے۔ انہیں چاہئے کہ وہ اپنی غذاپر دھیان دیں۔ میٹھا کم کھائیں، بازاری کھانوں سے پرہیز کریں۔ بڑا گوشت بالکل ترک کر دیں، پھل اور سبزیوں کا استعمال زیادہ کریں۔

 خشکی 

سردیوں میں جب جلد خشک ہوتی ہے تو آپ کی آنکھوں کے اوپر خشکی آنے لگتی ہے، جس کی وجہ سے خارش اور آنکھ میں سرخی ہو جاتی ہے۔ بالوں میں بھی خشکی کا مسئلہ شدید ہو جاتا ہے۔ سر میں خارش ہوتی ہے اور کوئی حل نظر نہیں آتا۔ پاکستان کے وہ علاقے جہاں اونی کپڑوں کا استعمال زیادہ ہوتا ہے وہاں خشکی کے مسائل بھی زیادہ سامنے آتے ہیں۔ ایسے علاقے میں رہنے والوں کو چاہئے کہ گاجر کا جوس لازمی پئیں۔ جن بچوں کو خشک جلد کے مسائل ہوتے ہیں ان کیلئے آپ گاجر کے جوس میں سرسوں یا زیتون کا تیل ملا کر رکھ لیں اور اس تیل سے بچوں کا مساج کریں۔ یہ بہت فائدہ مند ہے۔ 

بالوں کے مسائل

خواتین کے حوالے سے بالوں کا تذکرہ لازم و ملزوم ہے۔ خشک موسم میں بالوں میں خشکی آنے لگتی ہے، بال روکھے ہو جاتے ہیں، جھڑنا شروع ہو جاتے ہیں۔ خشکی اور روکھے بالوں کیلئے یہ تیل تیار کر کے گھر میں رکھ لیں۔ تخم ملنگا، سفوف، زیتون کا تیل، کھوپرے کا تیل، کالی مرچ، روز مری  آئل، ٹی ٹری آئل کو ملا کر بالوں کی جڑوں میں لگائیںاور دوسرے دن کسی اچھے شیمپو سے دھو لیں۔

بالوں کیلئے پروٹین کریم ، نمکین مکھن دو چمچ، انڈے کی زردی دو عدد، انار چھوٹا (چھلکے سمیت) ایک عدد دھماسہ بوٹی، پیاز کے چھلکے کا اوپر کا حصہ دو عدد، سیب کا سرکہ دو چمچ ، پانی دو پیالی۔سب سے پہلے دھماسہ بوٹی اور پیاز کے چھلکوں کو رات بھر کیلئے سرکہ اور پانی میں بھگو دیں۔ اس کے بعد اس میں انار ملا کر ابال لیں۔ جب اچھی طرح ابل جائے، اس کو مل کر چھان لیں۔ پھر اس میں انڈے کی زردی اور مکھن ملا کر اچھی طرح سے بلینڈ کر لیں، قدرتی اجزا پر مشتمل یہ مرکب آپ کے بالوں کیلئے پروٹین کریم بن جائے گی۔ یہ آپ کے بالوں کو نرم، ملائم اور چمکدار بنائے گی اور بالوں کو گھنا اور لمبا کرنے میں بھی مدد کرے گی۔

چہرے کی خوبصورتی

 سردیوں میں جلد کے حوالے سے سب سے اہم مسئلہ یہ ہوتا ہے کہ چہرے پر خشکی آنے لگتی ہے جس کی وجہ سے چہرے کی رنگت خراب ہو جاتی ہے۔ ہونٹ بہت زیادہ پھٹنے لگتے ہیں، خشک ہو جاتے ہیں، ایڑھیاں پھٹنے لگتی ہیں۔ ان سب کی حفاظت کیلئے آپ کو بہت سی چیزوں کا خیال رکھنا چاہئے، جیسا کہ آپ اپنی غذا پر زیادہ دھیان دیں، پھل اور سبزیوں کا استعمال زیادہ کریں، ناریل کھائیں، ناریل کا پانی پئیں۔ پانی زیادہ سے زیادہ پئیں تاکہ آپ کے جسم کی خشکی کم ہو۔ایک ٹوٹکا نوٹ کر لیں،اس موسم میں مفید ثابت ہو گا۔

روپ نکھارنے کیلئے جوس پینا چاہئے، انار کا جوس 60ملی لیٹر، گاجر کا جوس 60ملی لیٹر، چقندر کا جوس60ملی لیٹر، چکوترا کا جوس 60ملی لیٹر، ان سب کو ملا کر ایک گلاس بن جائے گا240 ملی لیٹر۔ روزانہ صبح نہار منہ پئیں۔ خون کی کمی کو پورا کرے گا۔ روپ نکھارے گا اور Liver Detoxifyکرے گا۔

ڈاکٹر بلقیس معروف ہربلسٹ اورٹی و ی و سوشل میڈیا کی ہر دلعزیز شخصیت ہیں،

 ان کے مضامین اور ویڈیوز لوگوں 

میں بہت مقبول ہیں

 

 

روزنامہ دنیا ایپ انسٹال کریں
Advertisement

گولڈ میک اپ

میک اپ ٹرینڈ کی سب سے اچھی خوبی یہ ہوتی ہے کہ جلدی آتے ہیں اور جلدی چلے جاتے ہیں اور کسی ایک انداز کو ہمیشہ کیلئے اپنا لینے کی بیزاری سے بچت ہو جاتی ہے۔ ویسے نئے انداز اور فیشن کا تقاضا یہی ہے کہ آپ بھی ٹرینڈ کے ساتھ ساتھ میک اپ تکنیک بدلنے کی کوشش کرتی رہیں۔ اس طرح آپ کو تازگی کا احساس بھی ہوگا اور آپ ایک جیسے انداز اور میک اپ لک سے بیزار بھی نہ ہوں گی۔

گھر گرہستی، کم سامان جیون آسان

آپ نے وہ مشہور محاورہ ’’تھوڑا ہی بہت ہے‘‘ سنا ہو گا۔ پچھلے چند برسوں میں یہ محاورہ ایک اصول جیسی اہمیت اختیار کر گیاہے اور زندگی کے کئی اہم شعبوں میں اسے اپنایا جا رہا ہے۔ اس اصول کے تحت کوشش کی جاتی ہے کہ ضرورت زندگی کو محدود کیا جائے اور ہر چیز کے استعمال میں معتدل انداز اپنایا جائے۔ ہوم آرگنائزنگ کے مضمون پر مہارت رکھنے والوں کا ماننا ہے کہ گھر سنوارنے اور اسے اضافی سامان سے بچائے رکھنے کا سنہری اصول ایک ہی ہے ’’جب بھی کچھ نیا خریدا جائے، گھر میں موجود اس جیسا پرانا سامان ضرور نکال دیا جائے‘‘۔یعنی اگر ایک نیا گلاس سیٹ خریدا ہے تو اس کے بدلے گھر میں موجود کوئی پرانا گلاس سیٹ نکال باہر کریں۔ اس طرح گھر میں سامان کا رش نہیں لگے گا۔

رہنمائے گھرداری

بازوئوں کی سانولی رنگت گھر سے باہر جا کر کام کرنے والی اکثر خواتین یہ شکوہ کرتی پائی جاتی ہیں کہ ان کے بازوئوں کی رنگت سانولی ہو جاتی ہے۔ ایسی خواتین کو سب سے پہلے تو یہ مشورہ دوں گی کہ اگر آپ کے بازو دھوپ کی وجہ سے کالے ہو رہے ہیں تو آپ باہر نکلتے وقت دستانے پہنا کریں۔ کوئی اچھا سن بلاک استعمال کرنا بھی ضروری ہے۔ اس کے علاوہ میں آپ کو ایک ابٹن بنانا بتا رہی ہوں، آپ وہ استعمال کریں، اللہ نے چاہا تو فرق پڑے گا۔

آج کا پکوان،چاکلیٹ سپیشل

کھیر، مٹھائی، زردہ اور رس ملائی پرانی ہوئی، آج کا زمانہ چاکلیٹ کا ہے، اس کی مدد سے لذیذ میٹھی سوغات تیار کی جاتی ہیں اور ہر قسم کی تقریب، موسم اور موقع پر انہیں پیش کیا جاتا ہے۔ یوں تو زیادہ میٹھا کھانا اچھا نہیں لیکن ’’چاکلیٹ‘‘ مفید غذا ہے۔ تحقیق سے ثابت ہوا ہے کہ صحت بخش چاکلیٹ وہ ہوتی ہے جس میں 70فیصد کوکو پائوڈر اور چینی کی تعداد کم سے کم ہو۔ چاکلیٹ میں قدرتی اینٹی آکسیڈنٹس کی بڑی مقدار شامل ہوتی ہے۔ بچے اوربڑے اسے شوق سے کھاتے ہیں۔ اسی مقصد کے تحت آج یہاں چاکلیٹ کی آسان ترکیب پیش کی جا رہی ہیں، امید ہے آپ ان کو آزمائیں گی۔

یادرفتگان: صوفی غلام مصطفیٰ تبسم عظیم شاعر، مفکر اور استاد

اردو ادب کی ہمہ جہت شخصیت صوفی غلام مصطفی تبسم اردو کے نامور شاعر اور ادیب تھے۔ ان کی خدمات کا دائرہ بہت وسیع ہے۔ وہ بیک وقت استاد، اداکار، ڈرامہ نگار، غزل گو، نظم گو، بچوں کے شاعر، ملی نغمہ نگار، مترجم، مدیر، صداکار، فارسی کے عالم، خانہ فرہنگ ایران کے ڈائریکٹر اور پاکستان کرکٹ بورڈ کے پہلے چیئرمین بھی تھے۔

شوکت واسطی: لفظوں کے جادوگر

شوکت واسطی ایک نابغہ روزگار شخصیت اور مرنجان مرنج شخص تھے۔ ان کا اصل نام سید صلاح الدین تھا مگر ان کا ستارہ ان کے قلمی نام شوکت واسطی کی شکل میں آسمان ادب پر روشن رہا۔ آپ اردو کے قادرالکلام شاعر تھے۔ اس کے ساتھ جب ان کی نثری تحریر کا مطالعہ کیا جائے تو محسوس ہوتا ہے کہ ہر لفظ ان کے سامنے زانوئے ادب تہ کئے حاضر ہو جاتا تھا۔