نیوز الرٹ
  • بریکنگ :- فیصل آباد:وزیرمملکت اطلاعات فرخ حبیب کا جلسے سے خطاب
  • بریکنگ :- حکومت ملی توملک قرضوں کی دلدل میں پھنساہواتھا،فرخ حبیب
  • بریکنگ :- عمران خان ملکی ترقی وخوشحالی کیلئےکوشاں ہیں،فرخ حبیب
  • بریکنگ :- سابق حکمرانوں نےملکی پیسہ لوٹ کربیرون ملک جائیدادیں بنائیں،فرخ حبیب
  • بریکنگ :- برآمدات میں تیزی سےاضافہ ہورہاہے،فرخ حبیب
  • بریکنگ :- (ن)لیگ دورمیں پاورلومزکوتالےلگےتھے،فرخ حبیب
  • بریکنگ :- دنیانےکورونامیں پاکستان کی اسمارٹ لاک ڈاؤن پالیسی کوسراہا،فرخ حبیب
  • بریکنگ :- برطانوی وزیراعظم نےماحولیات سےمتعلق عمران خان کےاقدامات کی تعریف کی،فرخ حبیب
  • بریکنگ :- پوری دنیامیں مہنگائی کا50 سالہ ریکارڈٹوٹ گیا،فرخ حبیب
  • بریکنگ :- 10کروڑلوگوں کوکوروناویکسین لگاچکےہیں،فرخ حبیب
  • بریکنگ :- پیپلزپارٹی ،(ن)لیگ نےاقتدارمیں آکرصرف اپنےبچوں کاسوچا،فرخ حبیب
  • بریکنگ :- عمران خان اپنےمحلات نہیں غریب کوگھربناکردےرہاہے،فرخ حبیب
  • بریکنگ :- گھروں کےلیے 90ارب کےقرضےمنظورہوچکےہیں،فرخ حبیب
  • بریکنگ :- یہ لوگ ووٹ کوعزت دینےکی بات کرتےتھے،فرخ حبیب
  • بریکنگ :- 2،2ہزارروپےمیں ووٹ کوعزت دےرہےتھے،فرخ حبیب
Coronavirus Updates

بلوچستان میں سیاسی بحران کا خاتمہ، جام کمال کے مستعفی ہونے پر کابینہ بھی تحلیل

پاکستان

کوئٹہ: (دنیا نیوز) بلوچستان میں سیاسی بحران کا خاتمہ ہوگیا۔ جام کمال وزارت اعلیٰ سے مستعفی ہوگئے۔ گورنر نے استعفی منظور کرلیا۔ کابینہ کی تحلیل کا نوٹیفکیشن جاری کر دیا گیا۔

گورنر ہاؤس بلوچستان کے ترجمان کے مطابق وزیراعلیٰ جام کمال نے اپنا استعفیٰ گورنر سید ظہور آغا کو پیش کیا۔ جس کے بعد گورنر بلوچستان نے جام کمال کا استعفی منظو کر لیا۔

جام کمال کے وزارت اعلیٰ سے مستعفی ہونے کا فیصلہ گورنر ہاؤس میں اعلی سطح اجلاس میں کیا گیا۔ جام کمال کے مستعفی ہونے کے بعد بلوچستان کی صوبائی کابینہ بھی تحلیل ہوگئی۔

 بلوچستان اسمبلی کا اجلاس آج بجے ہوگا۔ اجلاس میں 20 اکتوبر کو پیش کردہ تحریک عدم اعتماد کی قرار داد پر رائے شماری ہونا تھی تاہم وزیر اعلیٰ بلوچستان جام کمال کے مستعفی ہونے کے باعث تحریک عدم اعتماد کو نمٹا دیا جائے گا۔

واضح رہے بلوچستان میں اپوزیشن کی جانب سے جام کمال کے خلاف شروع ہونے والا معاملہ بلوچستان عوامی پارٹی کے چند ناراض اراکین نے اسمبلی میں تحریک عدم اعتماد پیش کر کے آگے بڑھایا، اس قافلے میں پارٹی سمیت اتحادی جماعتوں کے مزید اراکین بھی شامل ہونے لگے۔

جام کمال اپنے موقف پر ڈٹے رہے اور بالآخر ماضی کی روایت برقرار رہی اور وزیراعلیٰ جام کمال نے اپنے خلاف پیش ہونے والی تحریک عدم اعتماد پر رائے شماری ہونے سے قبل ہی گھٹنے ٹیکتے ہوئے عہدے سے استعفیٰ دے دیا۔

Advertisement
روزنامہ دنیا ایپ انسٹال کریں