پرویزالہٰی کو گھر بحفاظت نہ پہنچانے کیخلاف دائر توہین عدالت کی درخواست کا تحریری فیصلہ جاری

لاہور: (دنیا نیوز) لاہور ہائیکورٹ نے پرویزالہٰی کو گھر بحفاظت نہ پہنچانے کے خلاف دائر توہین عدالت کی درخواست کا تحریری فیصلہ جاری کر دیا۔

جاری کئے گئے فیصلے میں کہا گیا ڈی آئی جی آپریشن اور ڈی آئی جی انویسٹی گیشن نے تحریری طور پر غیر مشروط معافی مانگی، مستقبل میں دونوں افسروں نے احتیاط کرنے کی یقین دہانی کرائی، عدالت کو مزید کارروائی کی ضرورت نظر نہیں آتی، توہین عدالت میں سزا دینے کا اختیار ایک غیر معمولی طاقت ہے۔

تحریری فیصلہ میں کہا گیا جہاں ضروری ہو اس کا استعمال انتہائی احتیاط کے ساتھ کیا جاسکتا ہے، توہین کا مقصد انتقام لینا نہیں ہے، اسلام میں معاف کرنے کا ذکر بھی ہے، پولیس افسر کے مطابق عدالتی حکم کے بعد گھر کے قریب سے اسلام آباد پولیس نے پرویزالہٰی کو گرفتار کیا تھا۔

جاری کئے گئے فیصلے میں مزید کہا گیا پولیس افسروں کے مطابق اسلام آباد پولیس کے پاس جوڈیشل مجسٹریٹ کا گرفتاری کا حکم موجود تھا، گرفتاری کے بعد دونوں افسروں نے رجسٹرار ہائیکورٹ کو گرفتاری سے متعلق آگاہ کیا۔

جسٹس سلطان تنویر احمد نے سات صفحات پر مشتمل تحریری فیصلہ جاری کیا، پرویزالہٰی کی اہلیہ قیصرہ الہٰی نے توہین عدالت کی درخواست دائر کر رکھی تھی۔
 

Advertisement
روزنامہ دنیا ایپ انسٹال کریں