پرانی سوچ کو چھوڑ کر عوام کو معیشت، سیاست میں حصہ دار بنانا پڑیگا: بلاول بھٹو

کوئٹہ: (دنیا نیوز) پاکستان پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو نے کہا ہے کہ ہمیں اپنی پرانی سوچ کو چھوڑ کر عوام کو معیشت، سیاست میں حصہ دار بنانا پڑے گا۔

کوئٹہ میں بلاول بھٹو زرداری نے بلوچستان ہائی کورٹ بار سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ بلوچستان کے لوگوں کے دکھ اور تکلیف کا مجھے احساس ہے۔

ہم سب نے ملکر ایک نئے دور سیاست کو متعارف کرانا ہے

انہوں نے کہا ہے کہ ہم سب نے ملکر ایک نئے دور سیاست کو متعارف کرانا ہے، ہم نفرت، تقسیم اور انا کی سیاست ختم کر کے آگے بڑھیں گے، انشاءاللہ پیپلز پارٹی کی حکومت بنے گی، ہم سب سے پہلے بلوچستان کے عوام کو انکا حق دلوائیں گے۔

بلاول بھٹو نے کہا ہے کہ آصف زرداری نے حقوق بلوچستان کا آغاز کیا تو وہ یہاں کے عوام کی جیت تھی، آصف زرداری نے جب اٹھارہویں ترمیم پر دستخط کیے تو وہ بلوچستان کی جیت تھی، آصف زرداری نے جب این ایف سی کا اعلان کیا تو وہ بلوچستا ن کی جیت تھی۔

ان کا کہنا تھا کہ ہم نے تھر کے وسائل میں وہاں کے عوام کو حصہ دار بنایا، ہم نیشنل گرڈ پر سب سے سستی بجلی پہنچارہے ہیں، فیصل آباد تک بجلی جارہی ہے، ہمیں افریقہ کی طرح پیش کیا جاتا تھا، تھر کی عورتیں اب تھرکول منصوبے پر ٹرک ڈرائیور کی ذمہ داریاں ادا کررہی ہیں۔

بتایا جا رہا ہے 3 مرتبہ کا وزیراعظم چوتھی بار اقتدار میں آکرملک کو مشکلات سے نکالے گا

چئیرمین پاکستان پیپلز پارٹی بلاول بھٹو زرداری کا کہنا ہے کہ ہمیں بتایا جا رہا ہے 3 مرتبہ وزیراعظم رہنے والے چوتھی مرتبہ اقتدار میں آکر ملک کو مشکلات سے نکالیں گے۔

بلوچستان کے عوام کے ساتھ زیادتی ہورہی ہے

چیئرمین پی پی نے کہا کہ ہم نے سندھ میں پبلک پرائیویٹ پارٹنر شپ سے ڈویلپمنٹ کی ہے، کیا بلوچستان کے شہری خود کو سی پیک کا حصہ دار سمجھتے ہیں یا نہیں؟ میں سمجھتا ہوں بلوچستان کے عوام کے ساتھ زیادتی ہورہی ہے، سی پیک کی بنیاد آصف زرداری نے رکھی، پسماندہ علاقے کو ترقی دلوانی تھی۔

بلاول بھٹو نے کہا کہ بلوچستان کے پاس معدنیات اور وسائل ہیں، اتنے وسائل پورے پاکستان میں نہیں جتنے بلوچستان میں ہیں، سی پیک کی بنیاد صدر آصف زرداری نے رکھی تھی، میں جانتا ہوں آصف زرداری کے ارادے اور سوچ کیا تھی۔

سابق وزیر خارجہ نے کہا ہے کہ ہمیں اپنی پرانی سوچ کو چھورنا پڑے گا، ہمیں اپنے عوام کے مفاد کے بار سوچنا پڑے گا، عوام کو معیشت اور سیاست میں حصہ دار بنانا پڑے گا، میں چاہتا ہوں پاکستانی دنیا میں جہاں چاہیں وہاں پہنچ سکیں۔

میں اور آپ مل کر ایک نئی تاریخ رقم کریں گے

بلاول بھٹو نے مزید کہا ہے کہ پیپلز پارٹی نے ہمیشہ عوام پر بھروسہ کیا ہے، میں اور آپ مل کر ایک نئی تاریخ رقم کریں گے، اس ملک کی قسمت ہم بدل سکتے ہیں، ملک کا سب سے جوان وزیر خارجہ رہ چکا ہوں، مجھے معلوم ہے اس ملک کے عوام میں کتنا پوٹینشل ہے، ہم ملک کو دنیا میں ماڈرن ریاست کے طور پر پیش کرسکتے ہیں۔

ملک کی قسمت 2 لوگوں کے حوالے نہ کریں

چیئرمین پی پی نے کہا ہے کہ وہ سیاستدان جنہوں نے ہمارا خون سستا کردیا انکو دوبارہ موقع نہ دیں، پاکستان کے مستقبل کے فیصلے عوام کو کرنے دیں، میں یہ بھی جانتا ہوں جب نوجوان فیصلہ کر لیتے ہیں تو دنیا کی کوئی طاقت اسکو رد نہیں کرسکتی، میری درخواست ہے ان سب کو 8 فروری کو سرپرائز دیں، آپ اپنے ووٹ کا اختیار استعمال کریں، بڑی تعداد میں نکلیں، اس ملک کی قسمت 2 لوگوں کے حوالے نہ کریں۔ 

Advertisement
روزنامہ دنیا ایپ انسٹال کریں